کلرسیداں،عطائی ڈاکٹر کے غلط انجکشن نے ایک شخص کی جان لے لی

کلرسیداں،عطائی ڈاکٹر کے غلط انجکشن نے ایک شخص کی جان لے لی

کلر سیداں (تحصیل رپوٹر ) کلر سیداں کے نواحی گاوں تھوہا خالصہ میں عطائی ڈاکٹر نے پاؤں کا درد دور کرنے کے لیئے غلط انجیکشن لگا کر غریب خاندان کے سربراہ کی جان لے لی، ملزم کلینک بند کر کے فرار،لوگوں کا مظاہرہ شدید نعرے بازی،تفصیلات کے مطابق تھوہا خالصہ کے 45 سالہ جہانگیر نامی شخص کو جو اسی بازار میں گزشتہ 25 سال سے باربر شاپ چلا رہا تھا کو پاوں میں درد ہوا جس کی دوا کے لیئے مقامی عطائی ڈاکٹر تصور کے پاس تصور میڈیکل سٹور پر گیا جہاں مبینہ طور پر اس نے اسے انجیکشن لگایا جس سے اس کی تکلیف بڑھ گئی چنانچہ اسے راولپنڈی ہسپتال منتقل کرنے کی کوشش کی گئی اسی دوران چوکپنڈوڑی کے قریب دوران سفر ہی وہ دم توڑگیا واقعہ کی اطلاع پر عوام کا جمع غفیر تھوہا خالصہ میں عطائی ڈاکٹر کے کلینک کے باہر جمع ہوگیا جبکہ عطائی ڈاکٹر اس سے پہلے ہی خبر ہونے پر کلینک بند کر کے فرار ہو گیا عوام علاقہ نے شدید نعرے بازی کرتے ہوئے سخت قانونی کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...