تحصیل کونسل صوابی کا پراپرٹی ٹیکس کا ٹھیکہ 1 کروڑ 21 لاکھ میں نیلام

تحصیل کونسل صوابی کا پراپرٹی ٹیکس کا ٹھیکہ 1 کروڑ 21 لاکھ میں نیلام

صوابی( بیورورپورٹ) تحصیل کونسل صوابی میں پراپرٹی ٹیکس کا ٹھیکہ مبلغ 1کروڑ 21لاکھ روپے جب کہ لائسنس فیس کا ٹھیکہ چھ لاکھ 75ہزار روپے کی منظوری دے دی۔جب کہ جنرل بس اسٹینڈ کا ٹھیکہ 2کروڑ ،32لاکھ روپے کی منظوری دے دی گئی۔ اپوزیشن اراکین نے اجلاس سے واک آوٹ کیا کونسل کا اجلاس کنوینئر گوہر رحمن خان کی صدارت میں ہوا جس میں اراکین کونسل فاروق ، نیا ز علی شاہ ، اکرام ، محمد خالد ، فیض الحیات ، اقبال زادہ ، راشد سہیل ایڈوکیٹ ، خالد خان اور دیگر نے ایجنڈے کے مطابق مختلف ٹھیکہ جات امن و امان ، منشیات اور دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا۔اپوزیشن اراکین نے تر قیاتی فنڈ میں امتیازی سلوک روا رکھنے کی شدید مذمت کی اور اجلاس سے بائیکاٹ کیا اراکین اسمبلی نے کہا کہ صوابی میں جواں بازی ، منشیات فروشی عروج پر ہے جب کہ پولیس بھتہ وصول کر رہی ہے صوابی میں ٹی ایم اے کے زیر نگرانی جنرل بس اسٹینڈ میں شیڈول سے زیادہ ٹیکس لیا جارہا ہے لہٰذا اس کا تدارک کیا جائے صوابی میں ایک اور جنرل بس اسٹینڈ قائم کیا جائے مچھر مار دوائی کے سپرے کر نے والے کے ذمہ دار کو معطل کر کے تحقیقات کرائی جائے ۔ کونسل نے ٹی ایم اے کی دکانوں کے کرایوں میں سالانہ چالیس فی صد اضافے کی بھی منظوری دے دی۔ تحصیل ناظم واحد شاہ نے کہا کہ تمام ٹینڈر اوپن ہونگے سبزی اور فروٹ منڈی کے ٹینڈر کی منظوری بھی ہاؤس دے گی۔#

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...