وفاق المدارس کا امتحانی نظام فول پروف ہے ،مولانا انوارا لحق

وفاق المدارس کا امتحانی نظام فول پروف ہے ،مولانا انوارا لحق

پشاور(پاکستان نیوز) وفاق المدار س کا نظام امتحان دوسرے عصری اداروں کے لئے قابل تقلید ہے کوئی بھی ادارہ اس طرح پرسکون ،پرامن اور شاندار نظام نہیں دکھا سکتا۔کراچی تا چترال ایک ہی وقت میں پرچہ کھولاجاتا ہے ۔پرچہ اوٹ ہونے کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔وفاق المدارس ایک نیٹ ورک ہے جو مدارس دینیہ کے لیے مضبوط ڈھال ہے ۔قوت ،اتحا د اور اجتماعیت کاواحد نشان ہے ۔مدارس مسلمانوں کے دین وایمان اور قرآن وسنت کی مبارک تعلیمات کے تحفظ کا فریضہ سرانجام دے رہے ہیں ۔ وفاق المدارس کے مرکزی نائب صدر مولانا انوار الحق نے ضلع نوشہرہ،ضلع صوابی،مردان ،چارسدہ اور پشاور کے مختلف سنٹروں کے معائنے کے دوران میڈ یا سے بات چیت کررہے تھے۔انہوں نے مزید کہا کہ پورے خیبر پختونخوا میں 737امتحانی سنٹرز قائم ہیں ۔کسی بھی سنٹر ز سے اب تک ناخوشگوار واقعہ کی اطلاع موصول نہیں ہوئی۔خیبر پختونخوا میں چار ہزار چارسواٹھترچاق وچوبند نگران عملہ نگرانی کے فرائض سرانجام دے رہے ہیں جبکہ ہر ضلع میں وفاق المدارس کے ضلعی مسؤل نظام امتحان کا نگران ہوتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ صوبائی ناظم مولانا حسین احمد کے نگرانی میں صوبہ خیبر پختونخوا کا امتحانی عملہ بالکل فعال ہے اور دیگر صوبوں کے لیے رول ماڈل ہے۔انہوں نے مزیدکہا کہ وفاق المدارس کا امتحانی نظام بالکل شفاف ہے ہم محکمہ تعلیم کودعوت دیتے ہیں کہ وفاق المدارس کے امتحانی نظام سے فائدہ اٹھا کر یکساں نظام تعلیم تشکیل کرکے ملک میں امیر وغریب کا فرق ختم کرے۔حکومت مدارس میں اصلاحات کی فکر چھوڑکر عصری تعلیمی اداروں کی اصلاح کرے وہاں اسلحہ کلچراور اساتذہ پر لاٹھی چارچ وغیرہ روکنے کے لیے اقدامات کرے۔انہوں نے مزید کہا کہ کہ دینی مدارس سے مذہب اور اسلامی تعلیمات کی جس طرح حفاظت ہوتی ہے اسی طرح ملک کی حفاظت اور اس کا استحکام کا دارومدار بھی انہی مدارس پر ہے

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...