، باجوڑ ایجنسی میں بجلی بندش سے پانی ناپید ،کربلا کا سماں

، باجوڑ ایجنسی میں بجلی بندش سے پانی ناپید ،کربلا کا سماں

باجوڑ ایجنسی ( نمائندہ پاکستان )باجوڑ ایجنسی بجلی بندش سیاسی مداریوں اور پولٹیکل انتظامیہ کیدرمیان رسہ کشی کے باعث گزشتہ چھ مہینوں سے بند۔کاروباری مراکز سنسان ۔پانی ناپید ۔ شدید گرمی کے باعث شہری بلبلا اٹھے۔تفصیلات کے مطابق باجوڑ ایجنسی کے مرکزی شہر خار اور دیگر مضافاتی علاقوں میں گزشتہ چھ مہینوں سے بجلی نہ ہونے کیوجہ سے شہری شدید مشکلات کا شکار ہیں باپردہ خواتین اور بچے دور دراز علاقوں اور تالابوں سے پانی سروں پر لانے پر مجبور ہوگئے ہیں جبکہ دوسری طرف شدید گرمی اور حبس کیوجہ سے بچوں میں متعدی بیماریاں پھوٹنے کا خطرہ پیدا ہو گیا ہے پولٹیکل ایجنٹ باجوڑ عامر خٹک کے تعیناتی کے بعد بجلی بحالی کے سلسلے میں باجوڑ اصلاحی جرگہ کے مشران کیساتھ کامیاب مزاکرات کئے تھے جس کے بعد دو مہینے گزرنے کے بعد بھی بجلی بحال نہ ہوسکی ذرائع کے مطابق علاقے کے ایم این اے بجلی بحالی کے سلسلے میں سب سے بڑی رکاوٹ سمجھے جاتے ہے کیونکہ پولٹیکل انتظامیہ نے باجوڑ اصلاحی جرگہ کو بجلی بحالی کی یقین دہانی کرائی تھی جس میں مقامی ایم این اے کو نظر انداز کیا گیا تھا جس کی وجہ سے ایم این اے اور پولٹیکل انتظامیہ کیدرمیان اختلافات کھل کر سامنے آگئے ہیں۔باوثوق ذرائع کے مطابق ایم این اے اور چیف ٹیسکو کیدرمیان انتہائی قریبی تعلق رہا ہے جس کی وجہ سے بجلی بحالی میں مسلسل روڑے اٹھکائے جا رہے ہیں یاد رہے اپریشن 2008 میں ہزاروں مکانات تباہ ہوئے تھے جس جس سے لاکھوں عوام متاثر ہوچکے ہیں بجلی سڑکوں کا نظام حتی کہ پوار انفراسٹر کچرتباہ ہو چکا ہے علاقہ چارمنگ تحصیل ماموند گزشتہ آٹھ سالوں سے بجلی سے محروم ہیں باجوڑ کے سیاسی اور سماجی تنظیموں نے وزیر اعظم محمد نواز شریف، گورنر خیبر پختونخوا اور چیف ٹیسکو سے ایجنسی میں فوری طور پر بجلی بحال کرنے کا مطالبہ کیا ہے بصورت دیگر باجوڑ پشاور شاہراہ بجلی بحالی تک بند کریں گے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...