پاکستان میں انٹرنیٹ کی سست رفتار سے تنگ لوگوں کیلئے بڑی خوشخبری آ گئی

پاکستان میں انٹرنیٹ کی سست رفتار سے تنگ لوگوں کیلئے بڑی خوشخبری آ گئی
پاکستان میں انٹرنیٹ کی سست رفتار سے تنگ لوگوں کیلئے بڑی خوشخبری آ گئی

  


لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کی وائس اور ڈیٹا کمپنی ”ملٹی نیٹ پاکستان“ اور اومان کی کمپنی ”اومان ٹیل“ نے کراچی اور اومان کے شہر برقہ کو ملانے کیلئے زیر سمندر فائبر کیبل بچھانے کے منصوبے کا اعلان کیا ہے جسے سلک روٹ گیٹ وے ون (ایس آر جی1 ) کا نام دیا گیا ہے، مستقبل میں فائبر کیبل گوادر تک لے جائی جائے گی۔

ایس آر جی 1 منصوبے کے تحت 900 کلومیٹر لمبی 2 فائبر کیبل زیر سمندر بچھائی جائیںگی اور ان میں سے ہر ایک کیبل کے ذریعے 10 ٹیرا بٹس پر سیکنڈ کے حساب سے ڈیٹا ٹرانسفر ہو سکے گا۔ مستقبل کے معاشی حب گوادر کو بھی بعد ازاں اس منصوبے کے ساتھ جوڑا جائے گا تاکہ اس کا رابطہ بھی پوری دنیا کے ساتھ ممکن ہو سکے۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

ملٹی نیٹ پاکستان اور اومان ٹیل اس منصوبے کے شراکت دار ہیں اور دونوں ہی مستقبل میں مزید ایک یا پھر دو کمپنیوں کو شراکت داری میں شامل کرنے پر بھی بات چیت کر رہے ہیں۔ ملٹی نیٹ کا کہنا ہے کہ ایس آر جی ون منصوبہ 18 ماہ مکمل ہونے کے بعد فعال ہو جائے گا اور اس منصوبے پر 24 ملین امریکی ڈالر لاگت آئے گی۔ دونوں کمپنیوں نے زیر سمندر فائبر کیبل بچھانے اور اس کی دیکھ بھال کیلئے ”Xtera“ کمپنی کے ساتھ معاہدہ بھی کر لیا ہے۔

اس معاہدے کی تکمیل پر پاکستان کو فوری طور پر 200 گیگا بٹس پرسیکنڈ اضافی بینڈ وڑتھ دستیاب ہو جائے گی جسے بعد ازاں ضرورت کے مطابق 20 ٹیرا بٹس پر سیکنڈز تک بڑھایا جا سکے گا۔ ملٹی نیٹ کا اس منصوبے کا حصہ ہونے کے باعث پاکستان کی انٹرنیٹ مارکیٹ میں پی ٹی سی ایل اور ٹی ڈبلیو 1 کی انٹرنیشنل بینڈوڑتھ پر اجارہ داری بھی ختم ہو جائے گی۔

روزنامہ پاکستان کی خبریں اپنے ای میل آئی ڈی پر حاصل کرنے اور سبسکرپشن کیلئے یہاں کلک کریں

ماہرین کا کہنا ہے کہ مارکیٹ میں ملٹی نیٹ کے آنے سے پاکستان میں آئی ایس پیز کیلئے انٹرنیٹ بینڈ وڑتھ کی قیمت میں بھی خاطرخواہ کمی ہو گی جبکہ ٹیلی کمیونیکیشن کمپنیز کیلئے بھی 60 فیصد تک کمی دیکھنے میں آئے گی۔ ماہرین کے مطابق اس وقت پاکستان میں بینڈوڑتھ ریٹ 3000 امریکی ڈالر پر ایس ٹی ایم ہے اور 2017ءکے خاتمے تک یہ 1,200 امریکی ڈالر پر ایس ٹی ایم ون آنے کی امید ہے۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی


loading...