یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل میں شامل تمام تنظیموں نے وزیر تعلیم سے مذاکرات کا بائیکاٹ کر دیا

یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل میں شامل تمام تنظیموں نے وزیر تعلیم سے مذاکرات کا ...

لاہور( ایجوکیشن رپورٹر)اساتذہ کے مفاد کے پیش نظر یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل پنجاب میں شامل ساری تنظیموں نے وزیر تعلیم پنجاب سے ہونے والے مزاکرات کا بائیکاٹ کر دیا. بائیکاٹ کی وجہ اساتذہ کی اپگریڈیشن اور پرائیویٹایزیشن پر ڈیڈ لاک برقرار ہے بے اختیار مزاکرات اساتذہ کے مفاد میں نہیں. نوٹیفکیشن کے جاری ہونے تک جدوجہد جاری رہے گی تمام اضلاع لاہور میں 16کو ہونے والے مظاہرے کی بھرپور تیاری کریں۔ یہ باتیں یونائیٹڈ ٹیچرز کونسل پنجاب کی کور کمیٹی کی میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے کنویینرطارق محمودنے کیں۔کور کمیٹی کے اجلاس میں رشید احمد بھٹی، حافظ غلام محی الدین ، کاشف شہزاد چوہدر ی ، اللہ بخش قیصر،، محمد اجمل شاد، اسحاق رحمانی ، محمد اشفاق نسیم ، محمد اختر ، اللہ رکھا گجر، حافظ عبدالناصر ، رائے غلام مصطفی،مرزا طارق، وحید مراد یوسفی شامل تھے۔

پنجاب کے اساتذہ کے ساتھ امتیازی سلوک کیا جارہا ہے۔

اساتذہ کو دیگر صوبوں کے مساوی مراعات دئیے بغیر پڑھو پنجاب بڑھو پنجاب کا نعرہ کامیاب نہیں ہوسکتا۔ کم تنخواہ ہونے کی وجہ سے خصوصا نئے اساتذہ اپنی ملازمت سے مطمئین نہیں۔ یہی وجہ ہے کہ وہ پڑھانے پر توجہ دینے کے بجائے اپنی تعلیم میں اضافے اور دیگر ملازمت کی تلاش میں لگے رہتے ہیں۔پرائمر ی سکول ٹیچر کو سکیل 14، ایلیمنٹری سکول ٹیچرز سکیل 16 اور سیکنڈری سکول ٹیچرز کی سکیل 17 میں اپ گریڈیشن کے برعکس صوبائی کابینہ نے صرف پرائمری سکول ٹیچرز کے لیے سکیل 12 کی منظوری دی ہے۔جسے اساتذہ پنجاب مسترد کرتے ہیں۔ اگر حکومت پنجاب نے چار لاکھ سے زائد اساتذہ کے ساتھ دوسرے صوبوں کے مساوی سلوک نہ کیا تو اساتذہ کی ناراضگی مہنگی پڑے گی اساتذہ مسائل اور مطالبات 15مئی تک منظور کرکے نوٹیفیکیشن جاری نہ ہوئے تو 16مئی کو مسجد شہداء4 سے دفتر وزیر اعلیٰ تک احتجاجی ریلی نکالی جائے گی اور دھرنا دیا جائے گا،جس میں پورے پنجاب کے اساتذہ شریک ہوں نیز ریلی کے موقع پر احتجاج کے انتہائی اقدام کا اعلان بھی کیا جائے۔ مزید یہ کہ سرکاری سکولوں کی دانش اٹھارٹی اور پنجاب ایجوکیشن فاؤندیشن کے ذریعے پرائیویٹایزیشن کا کوئی بھی طریقہ قبول نہیں کیا جائے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 4