ورچوئل یونیورسٹی کے زیرِ اہتمام' انسدادِبدعنوانی ' کے حوالے سے سیمینار

ورچوئل یونیورسٹی کے زیرِ اہتمام' انسدادِبدعنوانی ' کے حوالے سے سیمینار

لاہور(پ ر )ورچوئل یونیورسٹی آف پاکستان اور قومی احتساب بیوروکے شتراک سے انسدادِبدعنوانی کے حوالے سے ایم اے جناح کیمپس میں سیمینار کا انعقاد کیا گیا ۔جس میں نامور سکالر پروفیسرڈاکٹر خالد ظہیر، وائس ریکٹرایف سی کالج یونیورسٹی ڈاکٹر کسرو جے ڈوبیش، ورچوئل یونیورسٹی کے ریکٹر ڈاکٹرنوید اے ملک ، نیب کے ڈپٹی پراسیکیوٹر جنرل چوہدری خلیق الزمان اور دیگر نامور شخصیات نے خصوصی شرکت کی ۔اس موقع پر ورچوئل یونیورسٹی کے ریکٹر نوید اے ملک نے کہا کہ بدعنوانی کے خاتمے کے لیے مشترکہ جدوجہد کی ضرورت ہے۔انہوں نے انسدادِبدعنوانی کے لیے طلبہ میں آگاہی کی ضرورت پر زور دیا تاکہ اخلاقی اقدار کے حامل نوجوان بہتر انداز میں ملک و قوم کی خدمت کر سکیں ۔پروفیسرڈاکٹر خالد ظہیرنے کرپشن کی وجہ سے مایوس ہونے کی بجائے اِس کے خاتمے کے لیے مشترکہ جدوجہدکی ضرورت پرزور دیا۔

انہوں نے کہا کہ سوسائٹی اور معاشرے کے ہر فرد کوکرپٹ عناصر کی نشاندہی اور خود احتسابی کے زریعے اپنا کردار ادا کرنا ہوگا۔تقریب سے دیگر شرکاء نے بھی خطاب کیا اورکرپشن کی ہرسطح پر حوصلہ شکنی کو وقت کی اہم ضرورت قرار دیا۔بعد ازاں ورچوئل یونیورسٹی کی کریکٹر بلڈنگ سوسائٹی کے عہدیداروں کی تقریبِ حلف برداری کا بھی انعقاد کیا گیا۔اس موقع پر ورچوئل یونیورسٹی کے اساتذہ ‘ طلبہ ‘ اور سوسائٹی ممبران نے شرکت کی۔اس موقع پر دیگر یونیورسٹیوں اور ورچوئل یونیورسٹی کے دوسرے شہروں کے کیمپسز کے طلبہ نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعے شرکت کی۔

مزید : میٹروپولیٹن 4