سینیٹ، اپوزیشن کا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور مہنگائی پر شدید احتجاج 

سینیٹ، اپوزیشن کا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور مہنگائی پر شدید ...

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) سینیٹ میں اپوزیشن پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے اور مہنگائی پر حکومت پر برس پڑی، وزیراعظم نے کہا تھا کہ آئی ایم ایف کے پاس گئے تو خودکشی کر لوں گا اورقوم اس انتظار میں ہے۔ ان خیالات کا اظہار گزشتہ روزسینیٹ میں شیری رحمان، میاں رضا ربانی، جاوید عباسی اور مولانا عبدالغفور حیدری نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے متعلق تحریک التوا ء پر بحث کے دوران کیا۔اپوزیشن ارکان نے کہا کہ آئی ایم ایف انڈے آلو سب کی قیمت بڑھائے گا اور حکومت فیتے کاٹے گی،تبدیلی سرکار کا رمضان پیکیج گیارہ سو روپے کا فی کلوگوشت ہے؟افطاری پر پیاز اور روٹی میسر نہیں،سیب کی قیمت 3 سو سے 5سو روپے کلو ہو گئی ہے،آج پاکستان کے طول و عرض میں لوگ چلا رہے ہیں،8 مہینے میں تاریخی مہنگائی ہوئی ہے ہمیں دھرنے کی ضرورت نہیں آپ نے خود پہیہ جام کر دیا، پاکستان کی معیشت  کو آئی ایم ایف کے حوالے کو کر دیا گیا، بجٹ اب آئی ایم ایف بنائے گا۔ وقفہ سوا لات میں میاں رضاربانی نے سٹیل مل کو نجکاری کی فہرست میں شامل کرنے اور چیئرمین ایف بی آر کی تعیناتی کا معاملہ اٹھایا تووفاقی وزیر برائے پارلیمانی امور اعظم خان سواتی نے کہا کہ سٹیل مل کی نجکاری نہیں کی جا رہی بلکہ اس کو بہتری کی طرف لے جایا جا رہا ہے، ایف بی آر کے چیئرمین کا تقرر مفادات کا ٹکراؤ نہیں۔ وزیر ہوا بازی ڈویژن غلام سرور خان اور وزیر مملکت پارلیمانی امور علی محمد خان نے جوا با ت دیتے ہوئے ایوان کو آگاہ کیا ہے کہ اس وقت پی آئی اے 416 ارب روپے خسارے میں جا رہا ہے، مانسہرہ ایئر پورٹ بنانے کاسیاسی اعلان تھا، آن گراؤنڈ کچھ نہیں ہے، نہ تو پی ٹی اے نے انٹرنیٹ ٹریفک کی نگرانی کاکوئی معاہدہ کیا ہے نہ ہی ایسے منصوبے پر کوئی سرکاری رقوم خرچ کی گئی ہیں،2017-18 کے دوران طورخم سرحد سے 97ارب 21 کروڑ روپے مالیت کی برآمدات کی گئیں جبکہ اسی عرصہ کے دوران 40ارب26 کروڑ روپے کی درآمدات کی گئیں۔

سینیٹ اجلاس

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر) چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی نے سینیٹ اجلاس سے وزرا کی عدم حاضری پر برہمی کا اظہار کر تے ہو ئے وزیراعظم کو خط لکھنے کا اعلان کر دیا۔ وقفہ سوالات کے دوران وزراء کی عدم موجودگی پر چیئرمین سینیٹ نے برہمی کا اظہار کیا اور کہا کہ وزراء اپنا رویہ ٹھیک کرلیں، یہ غیر سنجیدہ رویہ ہے، میں اس حوالے سے وزیراعظم کو خط لکھوں گا۔

چیئرمین سینیٹ

مزید :

صفحہ اول -