سانحہ واتا دربار، تحقیقات کیلئے جے آئی ٹی تشکیل، سہولت کار سمیت 6 دہشتگرد گرفتار

سانحہ واتا دربار، تحقیقات کیلئے جے آئی ٹی تشکیل، سہولت کار سمیت 6 دہشتگرد ...

  

لاہو ر(مانیٹر نگ ڈیسک،این این آئی) پنجاب حکومت نے سانحہ داتا دربار کی تحقیقات کیلئے مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی) تشکیل دے دی،جے آئی پانچ رکنی ممبران پر مشتمل ہوگی۔محکمہ داخلہ کی جانب سے جاری کردہ نوٹیفکیشن کے مطابق جے آئی ٹی کے سربراہ سی ٹی ڈی کے ایس پی صہیب اشرف ہوں گے جبکہ اس کے دیگر ممبران میں آئی بی،آئی ایس آئی اور ایم آئی کے نمائندے شامل ہوں گے۔ محمد خالد انسپکٹر انویسٹی گیشن آفیسر سی ٹی ڈی لاہور بھی ممبر ہوں گے۔ جے آئی ٹی سانحہ داتا دربار کے حوالے سے اپنی رپورٹ مکمل کرکے آئندہ ایک ہفتہ میں محکمہ داخلہ کو پیش کرے گی۔

جے آئی ٹی

لاہور(کرائم رپورٹر) داتا دربار دھماکے کی تحقیقات میں بڑی پیشرفت‘ حساس اداروں نے خودکش حملہ آور کے مبینہ سہولت کار سمیت 6 دہشتگردوں کو گرفتارکرلیا۔ذرائع کے مطابق حساس اداروں نے گڑھی شاہو سے داتا دربار خود کش دھماکے کے مبینہ سہولت کار سمیت 6 دہشتگردوں کو گرفتار کرکے ان کے قبضے سے دھماکہ خیز مواد اور اہم دستاویزات بھی برآمد کرلی گئیں ہیں خودکش حملہ آور اور سہولت کار گزشتہ چند روز سے گڑھی شاہو میں رہائش پذیر تھے۔ سی سی ٹی وی فوٹیج میں حملہ آور کو دھماکہ کے روز صبح کے وقت بازار سے گزرتے دیکھا جاسکتا ہے، خودکش حملہ آور نے دھماکہ سے پہلے داتا دربار کی ریکی بھی کی، تفتیشی اداروں نے سی سی ٹی وی فوٹیجز کی چین ملا لی، سیکیورٹی اداروں کو مبینہ بمبار کو دربار لانے والے موٹرسائیکل رکشہ کا سراغ بھی مل گیا۔ دریں اثناء  سانحہ داتا دربار کا ایک اور 19 سالہ نوجوان مدثر شہید ہو گیا۔ اس طرح خود کش دھماکے میں شہادت نوش کرنے والوں کی تعداد 12 ہو گئی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ 19 سالہ شہید مدثر شہزاد اپنے گھر کا واحد کفیل تھا جو حیدر آباد سے ہجرت کر کے لاہور میں قیام پذیر ہوئے۔ شہید مدثر شہزاد موہنی روڈ میں آٹو سپیئر پارٹس کا کاروبار کرتا تھا اور وقوعہ کے روز وہاں سے گزر رہا تھا یہ بھی بتایا گیا ہے کہ میو ہسپتال لاہور مین زیر علاج 28 زخمیوں میں سے 19 زخمیوں کو ڈسچارج کر دیا گیا ہے۔ ایک زخمی کو آج کسی وقت ڈسچارج کر دیا جائے گا جبکہ باقی 6 زخمی میو ہسپتال میں بدستور زیر علاج ہیں۔ شہید مدثر شہزاد کے بارے میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ وہ اندرون لوہاری گیٹ کا رہنے والا ہے۔ اپنے اہل خانہ کے ساتھ کرائے کے مکان میں مقیم ہے جبکہ حکومت کی جانب سے کسی شخصیت نے تاحال مدثر شہزاد کے اہل خانہ سے رابطہ نہیں کیا۔

زخمی دم توڑ گیا

دھماکہ، گرفتار

مزید :

صفحہ اول -