پبی ،تندوروں اور ریسٹورانٹ میں سی این جی کے استعمال پر پابندی عائد

پبی ،تندوروں اور ریسٹورانٹ میں سی این جی کے استعمال پر پابندی عائد

  

پبی ( نما ئندہ پاکستان)ڈپٹی کمشنرنوشہرہ شاہد علی خان نے تندوروں اور ریسٹورانٹ میں سی این جی سیلنڈرز کی بطور ایندھن استعمال پرپابندی عائد کردی ہوٹل، ریسٹورنٹس اور تندوروں میں سی این جی سیلنڈرز بطور ایندھن استعمال کئے جارہے ہیں جس سے کئی ناخوشگوارواقعات رونما ہو ئے ہیںسی این جی پراڈکشن اینڈ مارکیٹنگ رولز 1992 کے تحت سی این جی سیلنڈرز صرف گاڑیوں میں بطور ایندھن استعمال کیا جاسکتا ہے نانبائی اور ہوٹل مالکان سی این جی سیلنڈر کی غیر محفوظ استعمال سے شہریوں کی زندگیوں کو خطرے میں ڈال رہے ہیں کئی واقعات میں قیمتی انسانی جانوں کی ضیاع کیساتھ ساتھ انفراسٹرکچر کو بھی نقصانات جیسے واقعات رونما ہوچکے ہیںسی این جی سیلنڈرز کا ہوٹلوں اورتندروں کیلئے ایندھن کے طور پر استعمال کرنا سی این جی پراڈکشن اینڈ مارکیٹنگ رولز 1992 کی خلاف ورزی ہے حکم نامے کی خلاف ورزی کرنیوالوں کیخلاف تعزیرات پاکستان کی زیر دفعہ 188، 285اور 286 کے تحت کاروائی ہوگی سی این جی سٹیشن مالکان، ہوٹل مالکان اور نانبائی حضرات حکم نامے پر عملدرامد کو یقینی بنائیں اور حکم نامے کی کاپی واضح جگہ پر اویزآں کردیں حکم نامے کا اطلاق سی این جی سٹیشن پر بھی ہوگا، سی این جی سٹیشن میں گاڑیوں کے علاوہ کسی بھی مقاصد کیلئے سی این جی سیلنڈر بھرنا سی این جی پراڈکشن اینڈ مارکیٹنگ رولز 1992 کی خلاف ورزی ہے خلاف ورزی کے مرتکب سی این جی مالکان کے خلاف سی این جی پراڈکشن اینڈ مارکیٹنگ رولز کے تحت بھی کاروائی کی جائیگی

مزید :

پشاورصفحہ آخر -