جوہری معاہدہ ختم کرنے پر امریکہ کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے: ایران

جوہری معاہدہ ختم کرنے پر امریکہ کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے: ایران

  

تہران (آئی این پی) ایران نے اقوام متحدہ سے نیوکلیئر ڈیل توڑنے پر امریکا کو انصاف کے کٹہرے میں لا نے کا مطالبہ کر دیا۔ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس کو لکھے گئے خط میں کہا ہے کہ لاقانونیت ساکھ کو متاثر اور عالمی امن و سلامتی کے لیے خطرہ بنتی ہے۔جواد ظریف نے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل سے مطالبہ کیا کہ نیوکلیئر ڈیل توڑنے پر امریکا کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے۔انہوں نے مزید کہا کہ نیوکلیئر ڈیل کے حوالے سے امریکا کا دیگر رکن ممالک پر دباؤ کا بھی نوٹس لیا جائے۔ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف نے یورپی یونین کے امور خارجہ کے نمائندے کو بھی ٹیلی فون کر کے نیو کلیئر ڈیل کے معاملات پر تبادلہ خیال کیا۔دریں اثنا ایران نے بغیر پیشگی شرائط کے امریکا کے ساتھ قیدیوں کے تبادلے پر آمادگی ظاہر کر دی۔ ایرانی حکومت کے ترجمان علی ربیعی نے تاہم کہا کہ امریکا کی جانب سے اس ایرانی پیشکش کا اب تک کوئی جواب نہیں دیا گیا ہے۔ ایرانی میڈیا کے مطابق اس سلسلے میں ایران کی جانب سے واشنگٹن حکومت کو مطلع کیا جا چکا ہے کہ تہران حکومت ایران میں قید امریکی قیدیوں اور امریکا میں قید ایرانی قیدیوں کے تبادلے پر مذاکرات کے لیے تیار ہے۔ واضح رہے کہ سن 2019 میں امریکا اور ایران کے درمیان قیدیوں کے تبادلہ کیا گیا تھا۔

ایران

مزید :

صفحہ اول -