سیالکوٹ میں تمام اہل خانہ کو آگ لگا کر قتل کرنیوالا سگا بیٹا نکلا

سیالکوٹ میں تمام اہل خانہ کو آگ لگا کر قتل کرنیوالا سگا بیٹا نکلا

  

سیالکوٹ (آئی این پی) آوارہ گردی سے منع کرنے اور ڈانٹ ڈپٹ پر بدبخت بیٹے نے ماں باپ اور بہن بھائیوں کو پٹرول چھڑک کر آگ لگادی، ماں، باپ،ایک بیٹا اور دو بیٹیاں ہسپتال میں دم توڑ گئیں ایک بیٹا اور بیٹی ہسپتال میں زیر علاج ہیں جن کی حالت بھی تشویشناک ہے۔ پولیس نے ملزم بیٹے کو گرفتار کر لیاجس نے اعتراف جرم کرلیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز تھانہ سٹی کے علاقہ جامکے روڈ کے رہائشی محنت کش محمد اشرف کے گھر کے 7افراد آگ لگنے سے جھلس گئے۔ وقوعہ گیس لیکج،مچھر مار کوائل اور شارٹ سرکٹ کی وجہ بتائی گئی تاہم گزشتہ روزمتوفی اشرف کے بھائی اصغر کو شک گذرنے پر متوفی کے بڑے بیٹے علی حمزہ سے پوچھ گچھ کی تو اس نے اقبال جرم کر لیا جس پر ملزم کو تھانہ سٹی پولیس کے حوالے کردیا۔ ملزم علی حمزہ نے اقرار جرم کر تے ہو ئے بتایا کہ والدین آوارہ گردی سے منع کر تے اور اکثر ڈانٹ ڈپٹ کرتے رہتے تھے۔اس روز بھی انہوں نے ڈانٹ ڈپٹ کی تو وہ طیش میں آگیا اور کمرے میں سو ئے افراد پر پٹرول چھڑک کر آگ لگادی،دروازے کو باہر سے کنڈی لگا کر خود فرار ہو گیا۔اس واقع میں اس کا والداشرف،ماں یاسمین،بہنیں صوبیہ،فوزیہ،حرم شہزادی،بھائی حیدر اور علی رضا جھلس گئے تھے۔وقوعہ کی اطلاع ملتے ہی ریسکیو1122کے عملہ نے موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پا لیا اور تمام افراد کوطبی امداد کے لئے سول ہسپتال منتقل کردیا گیا۔جہاں سے تشویشناک حالت کے پیش نظر انہیں لاہور ریفر کردیا گیا۔لاہور ہسپتال میں اس کا والد45سالہ محنت کش اشرف ولد خان، بیوی 45سالہ بیوی یاسیمین،27سالہ بیٹی صوبیہ 26اپریل کو،بیٹا حیدریکم مئی کو اور 20 سالہ فوزیہ2مئی کو انتقال کر گئی تھیں۔13سالہ بیٹا علی رضا اور 9سالہ بیٹا حرم شہزادی ہسپتال میں زیر علاج ہیں ان کی حالت بھی تشویشناک بتائی جا رہی ہے۔ سٹی پولیس نے متوفی اشرف کے بھائی اصغر کی مدعیت میں ملزم علی حمزہ کے خلاف مقدمہ درج کر لیا ہے۔

سگا بیٹا

مزید :

صفحہ آخر -