احساس پروگرام میں مستحق افراد کو نظر انداز کیا جارہا ہے‘ لیاقت بلوچ

  احساس پروگرام میں مستحق افراد کو نظر انداز کیا جارہا ہے‘ لیاقت بلوچ

  

ملتان (سٹی رپورٹر)نائب امیر جماعت اسلامی پاکستان و صدر قائمہ کمیٹی برائے سیاسی امور لیاقت بلوچ نے کہاہے کہ حکومت نے کرونا وبا کے دوران قوم کو متحد کرنے کی بجائے مزید انتشار کا شکار کردیاہے۔ وفاق نے کر وناوبا کے موثر سدباب کے لیے صوبوں کو اعتماد میں (بقیہ نمبر58صفحہ6پر)

لے کر کچھ کرنے کی زحمت تک گوارا نہیں کی بلکہ صوبوں پر اپنی مبہم اور غیر واضح پالیسیاں ٹھونسنے کی کوشش کی جس سے نہ صرف بیماری کی روک تھام میں بلکہ ریلیف کے کاموں میں بھی مشکلات اور رکاوٹیں پیدا ہوئیں۔ تیل کی قیمتوں میں تاریخی کمی کا حکومت نے عوام کو فائدہ نہیں پہنچنے دیا۔ حکومت نے تیل کی قیمتوں میں ڈنڈی نہیں ڈنڈا مارا ہے،حکومت فی لیٹر پٹرول پر ساٹھ روپے زیادہ وصول کررہی ہے۔ حکومتی رویے نے ثابت کردیا ہے کہ وہ عوام کو ریلیف دینے کی بجائے خود عوام سے ریلیف لینا چاہتی ہے۔تعلیم اور صحت کا پورا ریاستی نظام زمین بوس ہوچکا ہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے منصورہ میں زوم ٹیلی کانفرنس کے ذریعے صوبائی امراؤ سیاسی و پارلیمانی کمیٹی کے ارکان سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ زوم ٹیلی کانفرنس کے دو سیشن ہوئے پہلے سیشن میں صوبائی امرا و صوبائی سیاسی کمیٹیوں کے ذمہ داران اور دوسرے سیشن میں مرکزی سیاسی کمیٹی کے ممبران نے شرکت کی۔ اجلاس سے ڈپٹی سیکریٹری محمد اصغر نے بھی خطاب کیا۔لیاقت بلوچ نے کہاکہ پورے ملک میں لاک ڈا?ن کی یکساں پالیسی اختیار نہیں کی گئی جس کی وجہ سے کرونا و با سے موثر طور پر نپٹنے میں مشکلات پیدا ہوئیں۔ حکومت اس خطرناک وبا کے موقع پر بھی سیاسی قیادت کو جمع نہیں کرسکی۔ حکومت کو احساس ہی نہیں کہ اس کی ذمہ داریاں کیاہیں۔ حکومت نان ایشوز کو ایشو بنا کر ڈنگ ٹپا? پالیسی پر گامزن ہے۔ حکومت احساس پروگرام چلارہی ہے مگر غریبوں کا احساس کرنے کی بجائے حکومتی پارٹی کے لوگ اپنے لوگوں کو نوازنے میں لگے ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ حکومت کو اب تک یہی معلوم نہیں کہ کرونا وبا کے دوران کساد بازاری کتنی ہوگی، مہنگائی اور بے روزگاری کس حد تک بڑھ جائے گی۔ کاروبار اور معاشی معاملات کا کیا ہوگا اور اس وبا سے کب تک نجات مل سکے گی۔انہوں نے کہا کہ کورونا وبا سے آٹھ کروڑ لوگ غربت کی سطح سے نیچے جانے اور پونے دوکروڑ بے روز گار ہونے کا خطرہ ہے مگر حکومت ابھی تک ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھی ہے اور آنے والے مصائب و مشکلات سے بچنے کیلئے کوئی سنجیدہ کوشش نہیں کررہی۔ لیاقت بلوچ نے کہاکہ کرونا وبا کے دوران ملک بھر میں جماعت اسلامی اور الخدمت کے کارکنوں نے عوام کی بے لوث خدمت کی جس کا اعتراف پوری قوم کر رہی ہے۔

لیاقت بلوچ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -