خطے میں بد امنی کے لیے بھارت کی ایک اور سازش ،ہمسائیہ ملک کی زمین پر قبضہ کرلیا

خطے میں بد امنی کے لیے بھارت کی ایک اور سازش ،ہمسائیہ ملک کی زمین پر قبضہ ...
خطے میں بد امنی کے لیے بھارت کی ایک اور سازش ،ہمسائیہ ملک کی زمین پر قبضہ کرلیا

  

نئی دہلی(ڈیلی پاکستان آن لائن )بھارت نے حال ہی میں کیلاش منسا روور لنک روڈ کا افتتاح کیا تھا جس پر نیپال نے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے اس پر اپنی ملکیت کا دعویٰ کیا ہے۔لنک روڈ بھارتی ریاست اترکھنڈ کے پتھورا گڑھ کو لپولیخ پاس سے ملاتا ہے اور نیپال کا دعویٰ ہے کہ لپو لیخ پاس اس کی ملکیت ہے۔اترکھنڈ لپولیخ پاس لنک روڈ کی 4 کلو میٹر کی روڈ پر ابھی کام باقی ہے اور روڈ کا افتتاح رواں برس میں ہونا ہے لیکن نیپال کی جانب سے زمین کی ملکیت کے دعوے سے لنک روڈ کی تعمیر کا معاملہ کھٹائی میں پڑ گیا ہے۔اس حوالے سے نیپال کے وزیر خارجہ پرادیپ کمار گیا والی کا کہنا ہے ہم نے بھارت پر واضح کر دیا ہے کہ وہ نیپال کی ملکیت میں آنے والے کسی بھی حصے میں کسی قسم کی تعمیر سے باز رہے۔

نیپال کے وزیر خارجہ کا بیان بھارتی وزیر دفاع راج ناتھ سنگھ کی جانب سے لنک روڈ کو عوام کے استعمال کے لیے کھولنے کی تقریب کے ایک روز بعد سامنے آیا ہے۔دوسری جا نب بھارت نے بھی نیپال کے زمینی ملکیت کے دعوے کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ لنک روڈ کا افتتاح پہلے سے موجود روٹ پر کیا گیا ہے اور یہ بھارت کی ملکیت ہے۔بھارتی ردعمل پر نیپال کے وزیر خارجہ کا کہنا ہے کہ ہم زمینی تنازع کے حل سفارتی ڈائیلاگ کے ذریعے سے حل کرنے کے لیے پرعزم ہیں، چاہتے ہیں کہ دونوں ممالک کاغذات، فیکٹس اور تاریخی معاہدوں کی روشنی میں زمینی تنازع کو حل کریں۔

مزید :

بین الاقوامی -