لڑکی نقلی پروفائل بنا کر لڑکے کے ساتھ خود کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے منصوبے بناتی رہی، لیکن کیوں؟ جان کر کوئی بھی چکرا جائے

لڑکی نقلی پروفائل بنا کر لڑکے کے ساتھ خود کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے ...
لڑکی نقلی پروفائل بنا کر لڑکے کے ساتھ خود کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے منصوبے بناتی رہی، لیکن کیوں؟ جان کر کوئی بھی چکرا جائے

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں سوشل میڈیا پر گزشتہ دنوں دو لڑکوں کی چیٹنگ کے سکرین شاٹس بہت وائرل ہوئے جن میںایک لڑکا دوسرے کو اپنی ایک کلاس فیلو لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کی ترغیب دے رہا ہوتا ہے۔ اب پولیس کی تحقیقات میں ان سکرین شاٹس کے متعلق ایسی حقیقت سامنے آ گئی ہے کہ سن کر یقین کرنا مشکل ہو جائے۔ ٹائمز آف انڈیا کے مطابق یہ سدھارتھ نامی لڑکا تھا جس نے دوسرے لڑکے کو سنیپ چیٹ پر سکول کی ایک لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کی ترغیب دی اور کہا کہ وہ مل کر اس کا گینگ ریپ کریں گے۔ دوسرے لڑکے نے اس مذموم منصوبہ بندی کا حصہ بننے سے انکار کر دیا اور چیٹنگ میں اسے جواب دینا بند کر دیا۔

اب پولیس کی تحقیقات میں معلوم ہوا ہے کہ سدھارتھ بن کر اس لڑکے ساتھ یہ منصوبہ بندی کرنے والا کوئی لڑکا نہیں بلکہ وہی لڑکی تھی جس کا ریپ کرنے کی منصوبہ بندی ہو رہی تھی۔ اس لڑکی نے سدھارتھ کے نام سے جعلی اکاﺅنٹ بنا کر اپنے کلاس فیلو سے رابطہ کیا۔ وہ اس کا امتحان لینا چاہتی تھی اور دیکھنا چاہتی تھی کہ اس کا کردار کیسا ہے اور وہ اس کے متعلق کیا سوچتا ہے۔ وہ لڑکا بن کر اپنے کلاس فیلو کے ساتھ اپنا ہی ریپ کرنے کی منصوبہ بندی کرنا چاہتی تھی لیکن لڑکا کردار کا اچھا نکلا۔ اس نے اس چیٹنگ کے سکرین شاٹس لے کر اپنے دوستوں کے ساتھ شیئر کر دیئے جن میں یہ لڑکی بھی شامل تھی۔ انہی میں سے کسی نے یہ سکرین شاٹس سوشل میڈیا پر پوسٹ کر دیئے جو وائرل ہو گئے اور معاملہ پولیس تک پہنچ گیا۔ پولیس کے مطابق یہ لڑکا لڑکی ایک ہی علاقے میں رہتے ہیں اور باہم دوست بھی ہیں۔ لڑکی نے تفتیش میں بتایا ہے کہ وہ صرف لڑکے کا کردار چیک کرنا چاہتی تھی۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -بین الاقوامی -