بہاولپورمیں چوبیس کنال اراضی پر بااثر مافیا قابض

بہاولپورمیں چوبیس کنال اراضی پر بااثر مافیا قابض

  

بہاولپور(نامہ نگار)عدالت عالیہ کے احکامات کے باوجود رفیع قمر روڈ تاسول ہسپتال سڑک کی 24کنال اراضی قبضہ گروپوں سے واگزار نہ کرائی جاسکی۔ محکمہ ہائی وے نے لینڈ مافیا کو نواز نے کے لئے سڑک کے پلان میں تبدیلی کرکے اسے زگ زیگ کر نے اور پرائیویٹ اراضی کو اس میں شامل کر نے کا وطیر ہ بنالیاہے۔ بہاولپور کے ممبر صوبائی اسمبلی سمیع اللہ (بقیہ نمبر37صفحہ6پر)

چوہدری نے رفیع قمر روڈ تاسول ہسپتال سڑک کی تعمیر کا منصوبہ منظور کرایا جس پر کروڑوں روپے لاگت کا تخمینہ تھا۔ اس سڑک کے لئے 24کنال سرکاری اراضی منظور کی گئی اس اراضی پر قبضہ مافیا کا قبضہ تھا جس نے اس اراضی پر سکول آئس فیکٹری اور دیگر کمرشل تعمیرا ت کررکھی تھیں۔ موضع حمایتی کی 10کنال اورموضع قادر بخش چنٹر کی 14کنال اراضی پر لینڈ مافیا کے پیر بخش، مشتاق، الطاف، نذیر،رفیق،شاکر،اللہ ڈتہ سمیت 22افراد نے وہاں دکانیں تعمیرکر رکھی ہیں۔ ایڈیشنل کمشنر ریونیو کی ہدایت پر محکمہ مال نے19فروری کو اس کی حد براری کی جبکہ کمشنر بہاولپور ظفر اقبال نے 15یوم کے اندر عدالت عالیہ کو یہ اراضی واگزار کرانے کی یقین دہانی کرائی اور اسسٹنٹ کمشنر نعیم صادق چیمہ کو یہ ڈیوٹی تفویض کی۔اس سڑک کے کچھ حصہ کی تعمیر پر کروڑوں روپے خرچ ہو چکے ہیں لیکن یہ سڑک بھی غیر معیاری اور زگ زیگ کرکے بنائی گئی ہے تاکہ لینڈ مافیا کو تحفظ دیاجاسکے سڑک کی تعمیر زیر التوا ہے اورتمام سرکاری و انتظامی مشینری قبضہ گروپوں کو تحفظ دینے میں مصروف ہیں سب انجینئر شاہد نے بتایاکہ سڑ ک کی چوڑائی 80فٹ ہے لیکن قبضہ گروپوں کے لیے اسے 20فٹ چوڑا تعمیر کیا جارہا ہے جب اسسٹنٹ کمشنر نعیم صادق چیمہ سے بات کی گئی تو انہوں نے کہاکہ کمشنر اور ڈپٹی کمشنر جب حکم دیں گے کاروائی ہو جائے گی شہریوں نے وزیراعلیٰ پنجاب سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیاہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -