بیوروکریسی کو غنڈہ بنا کر اسمبلی پر دھاوا بولا گیا،وزیر اعلیٰ کا استعفیٰ ہاتھ سے لکھا ہونا چاہیے، عمر سرفراز چیمہ

بیوروکریسی کو غنڈہ بنا کر اسمبلی پر دھاوا بولا گیا،وزیر اعلیٰ کا استعفیٰ ...
بیوروکریسی کو غنڈہ بنا کر اسمبلی پر دھاوا بولا گیا،وزیر اعلیٰ کا استعفیٰ ہاتھ سے لکھا ہونا چاہیے، عمر سرفراز چیمہ

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) سابق گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ کا کہنا ہے کہ پنجاب میں بیورو کریسی کو غنڈہ بنا کر اسمبلی پر دھاوا بولا گیا،قانون میں لکھا ہے کہ وزیر اعلیٰ کا استعفیٰ ہاتھ سے لکھا ہوا ہونا چاہیے ۔

نجی ٹی وی" ہم نیوز "کے مطابق سابق گورنر پنجاب عمر سرفراز چیمہ کا کہنا تھا کہ سیاستدانوں نے آئین میں بگاڑ پیدا کیا ،کس آئین یا قانون میں لکھا ہے کہ وزیر اعلیٰ کا حلف گورنر ہاؤس میں لینا ہے ،بیوروکریسی کو غنڈہ بنا کر اسمبلی پر دھاوا بولا گیا۔رہنما تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ اگر بیلٹ باکس پر غنڈے بٹھا دیئے جائیں، تو کیا یہ الیکشن ہے؟ گورنر کے حلف میں ہے کہ وہ معاملات کو آئین اور قانون کے مطابق دیکھے، ان کا مزید کہنا تھا کہ گورنر ہاؤس ریاست کی 300 سالہ تاریخ ہے، گورنر ہاؤس جیسی جگہوں کو محفوظ کرنا چاہیے جبکہ سیاستدانوں اور کارکنان کو ورثے کی تاریخ سے شناسائی ہونی چاہیے۔ 

مزید :

علاقائی -پنجاب -