پنجاب کے بعد سندھ  میں بھی ای سٹمپنگ نظام کا افتتاح کر دیا گیا

پنجاب کے بعد سندھ  میں بھی ای سٹمپنگ نظام کا افتتاح کر دیا گیا
پنجاب کے بعد سندھ  میں بھی ای سٹمپنگ نظام کا افتتاح کر دیا گیا

  

کراچی ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) پنجاب  میں کامیابی کے بعد کراچی میں بھی ای سٹمپنگ نظام کا افتتاح کر دیا گیا ،  نظام جعلی اور بوگس سٹامپ پیپرز کے خاتمے میں معاون ثابت ہو گا۔

کراچی میں ای سٹیمپنگ نظام کی افتتاحی تقریب  کا انعقاد ہوا جس میں چیئرمین پی آئی ٹی بی  آصف بلال لودھی نے شرکت کی اور کہا کہ  پنجاب میں کامیابی کے بعد سندھ میں بھی ای سٹیمپنگ نظام جعلی اور بوگس سٹامپ پیپرز کے خاتمے میں معاون ثابت ہو گا۔

ای سٹیمپنگ نظام کی افتتاحی تقریب میں   وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ‘ منسٹر ریونیو مخدوم محبوب زمان‘ سینئر ممبر بی او آر بقااللہ‘ صدر نیشنل بینک عارف عثمانی‘ سیکرٹری لوکل گونمنٹ نجم احمد شاہ‘ نگران گورنر سٹیٹ بینک مرتضیٰ سید‘ ڈی جی پی آئی ٹی بی ساجد لطیف‘ ڈائریکٹر حماد ہمدانی اور دیگر نے شرکت کی۔

چیئرمین پی آئی ٹی بی  آصف بلال نے کہا کہ سندھ کے 11 اضلاع میں منصوبے کا آغاز کر دیا گیا ہے اور جلد ہی نظام پورے سندھ میں پھیلایا جائے گا ، ای سٹامپ پیپر کے حصول کیلئے کوئی بھی شخص آن لائن جا کر مطلوبہ معلومات درج کرے گا تو سسٹم خودکار طریقے سے خریدار کیلئے سٹامپ پیپر کی مالیت طے کر دے گا‘اس طرح نیشنل بینک سے جوڈیشل اور نان جوڈیشل سٹامپ پیپر صرف پندرہ منٹ میں حاصل کئے جا سکیں گے۔

آصف بلال نےبتایا کہ   پنجاب میں ای سٹیمپنگ کے تحت حکومت کو اب تک 258 ارب روپے کا ریونیو وصول ہو چکا ہے جبکہ ایک  کروڑ  21  لاکھ سے زائد ای سٹامپ پیپرز جاری ہو چکے ،  پی آئی ٹی بی کی معاونت سے خیبرپختونخوا میں بھی یہ نیا نظام جلد نافذ کیا جا رہا ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -سندھ -