پنجاب کےسرکاری ہسپتالوں میں مفت فراہم کی جانیوالی دوا  نایاب، کینسر کے مریض دھکے کھانے  پر مجبور

پنجاب کےسرکاری ہسپتالوں میں مفت فراہم کی جانیوالی دوا  نایاب، کینسر کے ...
 پنجاب کےسرکاری ہسپتالوں میں مفت فراہم کی جانیوالی دوا  نایاب، کینسر کے مریض دھکے کھانے  پر مجبور

  

لاہور ( جاوید اقبال سے )صوبائی دارالحکومت لاہور کے تمام سرکاری ہسپتالوں میں کینسر میں مبتلا افراد کو مفت فراہم کی جانے والی دوائی  نایاب ،دھوپ گرمی اور تکلیف میں ہزاروں کینسر کے مریض اور ان کے لواحقین ذلیل و خوار ہونے پر مجبور ہوگئے ۔حکومت تبدیل ہوتے ہی پنجاب بھر میں کینسر  جیسے موذی مرض میں مبتلا مریض دھکے کھانے  پر مجبور ہوگئے سرکاری ہسپتالوں میں ضرورت مند اور غریب لوگوں کو گذشتہ حکومت کی جانب سے سی ایم ایل نامی کینسر کی دوائی مفت فراہم کی جاتی تھی جس سے ہزاروں  کینسر  کے مریض  مستفید ہو رہے تھے اور تکلیف سے بچ رہے تھے پر اب وہ دوائی کسی بھی سرکاری ہسپتال میں میسر نہیں جو ایک لمحہ فکریہ اور زیادتی ہے۔ مریضوں نے موجودہ حکومت خصوصاً وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز  سے درد مندانہ اپیل ہے کہ وہ کینسر جیسی بیماری میں مبتلا افراد پر رحم کریں اور مذکورہ دوائی کی مفت  فراہمی یقینی بنائیں ان کے اس اقدام سے ہزاروں لوگ وقت سے پہلے موت کے منہ میں جانے سے بچ جائیں گے۔ 

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -