”ٹیسٹ میچ جیتنے ہیں تو یہ کام ضرور کرنا پڑے گا“ مصباح الحق حیران کن بات کہہ دی

”ٹیسٹ میچ جیتنے ہیں تو یہ کام ضرور کرنا پڑے گا“ مصباح الحق حیران کن بات کہہ ...
”ٹیسٹ میچ جیتنے ہیں تو یہ کام ضرور کرنا پڑے گا“ مصباح الحق حیران کن بات کہہ دی

  



سڈنی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے چیف سلیکٹر و ہیڈ کوچ مصباح الحق نے کہا ہے کہ آسٹریلیا کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں اچھی کرکٹ کھیلنے کی کوشش کریں گے، پاکستان کی بیٹنگ لائن پلس پوائنٹ ہوگا اور پاکستان دونوں میچ جیتنے کی اہلیت رکھتا ہے، 400 سے زیادہ رنز بنانے میں کامیاب رہے تو آسٹریلیا کو ٹف ٹائم دے سکتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پاکستانی ٹیم کے ہیڈکوچ وچیف سلیکٹر مصباح الحق کا کہنا ہے کہ آسٹریلیا کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں بیٹنگ لائن ہمارا پلس پوائنٹ ہے، پاکستان ٹیم دونوں میچ جیتنے کی اہلیت رکھتا ہے، اظہر علی، اسدشفیق کے ساتھ بابراعظم اور افتخار احمد کافی اچھی فارم ہیں، اگر 400 سے زیادہ رنز بنانے میں کامیاب رہے تو میزبان ٹیم کو ٹف ٹائم دے سکتے ہیں۔ ہماری باﺅلنگ لائن میں یاسر شاہ جیسے باﺅلر کے ساتھ نوجوان اور اچھی سپیڈ والے نسیم شاہ، موسیٰ خان اور شاہین آفریدی جیسے کچھ کردکھانے کا جذبہ رکھنے والے نوجوان موجود ہیں، جن کے پاس خود کو منوانے کا یہ بہترین موقع ہے۔

انہوں نے کہ یاسر شاہ پہلے آسٹریلیا کا دورہ کرچکے ہیں اور اس دورے میں بھی وہ مکمل تیاری کے ساتھ آئے ہیں، ماضی میں جو غلطیاں ان سے ہوئیں، یقین ہے کہ اس بار وہ نہیں دہرائیں گے اور بہترین باﺅلنگ کرکے پاکستان کی پوزیشن کو مستحکم کریں گے، ٹیسٹ میچز میں جیت کیلئے 20 وکٹیں حاصل کرنا بہت ضروری ہوتا ہے،اس کے بغیر کامیابی کی امید نہیں رکھی جاتی، ہمیں آسٹریلیا کے خلاف ہر شعبے میں اچھی کرکٹ کھیلنا پڑے گی۔

مصباح الحق نے اعتراف کیا کہ ٹی 20 سیریز ہارنے کے بعد ٹیم کے مورال کو بلند رکھنا کافی مشکل ہوتا ہے لیکن کوشش ہے کہ ان لڑکوں سے بہتر نتائج لیں، ان لڑکوں میں کسی بھی ٹیم کے خلاف شاندار پرفارمنس دینے کی بھرپور اہلیت ہے، ہم دونوں میچ جیتنا چاہتے ہیں، اس سیریز میں مستقبل میں ہونے والے میچز کیلئے کافی کچھ سیکھنے کا موقع ملے گا، یہاں کھیلنے کا تجربہ آپ کو دوسرے میچز میں بہت کام آتا ہے، موسیٰ خان، نسیم شاہ، خوشدل ، عثمان قادر پاکستان کا مستقبل ہیں، دورہ آسٹریلیا کے بعد یہ مزید بہترپرفارم کرنے کے قابل ہوں گے۔

مزید : کھیل