یو اے ای میں 15سال بعد شکست کا سامنا ، سری لنکا نے پاکستان کو ٹیسٹ سیریز میں کلین سویپ کر دیا

یو اے ای میں 15سال بعد شکست کا سامنا ، سری لنکا نے پاکستان کو ٹیسٹ سیریز میں ...

  

دبئی (نیٹ نیوز ) یو اے ای کے صحرا میں شاہینوں کا ناقابل شکست رہنے کا ریکارڈ شرمناک طریقے سے ٹوٹ گیا ،15 سال بعد کسی ہوم ٹیسٹ سیریز میں شکست کا سامناکرناپڑا۔سری لنکا نے دوسرے ٹیسٹ میں بھی پاکستان کو 68 رنز سے شکست دے کر سیریز 0۔2 سے جیت لی ہے ،پاکستانی ٹیم 317 رنز کے ہدف کے تعاقب میں آخری روز اپنی دوسری اننگز میں 248 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی، اسد شفیق اور کپتان سرفراز احمد کی محنت بھی ٹیم کو شکست سے نہ بچا سکی، شفیق 112 اور سرفراز 68 رنز بنا کر نمایاں رہے، دلروون پریرا نے 5 کھلاڑیوں کو نشانہ عبرت بنایا، دیمتھ کرونارتنے میچ اور سیریز کے بہترین کھلاڑی قرار پائے۔ ہدف کے تعاقب میں قومی ٹیم نے پانچویں دن 5 وکٹوں کے نقصان پر 198 رنز سے شروع کی لیکن سرفراز احمد زیادہ دیر مزاحمت نہ کر سکے ،کپتان سرفراز احمد اور اسد شفیق نے چھٹی وکٹ کیلئے 173 رنز کی شراکت قائم کی لیکن 225 کے مجموعے پر کپتان سرفراز احمد 68 رنز بنا کر پریرا کی گیند پر کیچ آؤٹ ہو گئے۔سرفراز کے بعد محمد عامر بیٹنگ کیلئے آئے مگر وہ بھی صرف چار رنز بناکر دلروان پریرا کی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہوگئے۔پاکستان کی آٹھویں وکٹ 244 رنز پر یاسر شاہ کی گری جنہوں نے 23 گیندیں کھیل کر 5 رنز بنائے۔ س کے اگلے ہی اوور میں اسد شفیق بھی لکمل کی گیند پر مینڈس کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہو گئے۔اسد شفیق نے پاکستان کی جانب سے دوسری اننگز میں سب سے زیادہ 112 رنز اسکور کیے۔پاکستان کے دسویں وکٹ 248 رنز پر اس وقت گری جب وہاب ریاض ایک رنز بنا کر ہیراتھ کا شکار بنے۔ سری لنکا کی جانب سے دلروون پریرا نے 5 جبکہ ہیراتھ نے 2، لکمل، گاماگے اور فرننڈو نے ایک، ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔ دیمتھ کرونارتنے میچ اور سیریز کے بہترین کھلاڑی قرار پائے ،پاکستان کو متحدہ عرب امارات میں پہلی اور تقریباً 10 سال بعد کسی ہوم ٹیسٹ سیریز میں شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔اس سے قبل 2002 میں پاکستان کو آسٹریلیانے شکست سے دوچارکیاتھا۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -