عراق کا کردستان کے خلاف انتقامی اقدامات کا اعلان

عراق کا کردستان کے خلاف انتقامی اقدامات کا اعلان

  

بغداد(این این آئی)عراق کی حکومت نے شمالی صوبہ کردستان کی حکومت کی جانب سے آزادی کے لیے کرائے گئے ریفرینڈم کے بعد صوبے کے خلاف انتقامی اقدامات کا اعلان کیا ہے۔ بغداد کی جانب سے انتقامی اقدامات کا اعلان اس بات کا واضح اشارہ ہے کہ اربیل کے ساتھ مفاہمت کے حوالے سے ثالثی کی تمام کوششیں ناکام ہوگئی ہیں۔عرب ٹی وی کے مطابق عراق کی وزارت کونسل برائے نیشنل سیکیورٹی کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا کہ کونسل کردستان میں موجود عراقی املاک واپس لینے سمیت کئی دیگر انتقامی اقدامات کررہا ہے۔کابینہ کی سیکیورٹی کمیٹی کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا کہ نیشنل سیکیورٹی کونسل کے فیصلے اربیل میں موجود عراقی املاک کی واپسی اور بدعنوان عناصر کے تعاقب میں مدد دیں گے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ سیکیورٹی کونسل نے پراسیکیوٹر جنرل کے پاس ایک درخواست بھی دی ہے جس میں کردستان میں ریفرینڈم کا انعقاد کرنے والے سرکاری ملازمین کے خلاف کارروائی کی سفارش کی گئی ہے۔

مزید :

عالمی منظر -