ڈی ایس ریلوے ملتان سمیت 10افسران کو توہین عدالت کے نوٹس جاری عدالت میں جواب جمع کرانے کا حکم

ڈی ایس ریلوے ملتان سمیت 10افسران کو توہین عدالت کے نوٹس جاری عدالت میں جواب ...

  

ملتان،وہاڑی (خبر نگار خصوصی بیو رو رپورٹ+نما ئندہ خصوصی)لاہور ہائیکورٹ ملتان بنچ ملتان نے ڈی ایس ریلوے ملتان سمیت محکمہ ریلوے کے (بقیہ نمبر31صفحہ12پر )

10 افسران کو توہین عدالت کے نوٹسسز جاری کر دیئے اور 15 نومبر کو عدالت میں جواب جمع کروانے کا حکم دیا ہے۔ریلوے آفیسرز پر الزام ہے کہ انہوں نے عدالت عالیہ ہائی کورٹ ملتان بنچ سے کنفرم سٹے آرڈر ہونے کے باوجود ظفر اقبال ریلوے اسٹیشن پر ٹھیکیدار محمد سہیل حبیب کی 20 ایکڑ فصل کپاس اجاڑ دی تفصیلات کے مطابق محمد سہیل حبیب نے محکمہ ریلوے سے 34 ایکڑ رقبہ 15 سالہ لیز پر حاصل کر رکھا ہے اور اس سلسلے میں ٹھیکدار اور محکمہ ریلوے کے درمیان عدالت میں کیس بھی زیرسماعت ہے لیکن 3 اکتوبر کو ڈپٹی ڈائریکٹر پراپرٹی اینڈ لینڈ ملتان قاضی عبدالغفور نے اپنے اختیارات سے تجاوز کرتے ہوئے ریلوے مجسٹریٹ رمیض ظفر،اے ای این ملک سجاد، آء او ڈبلیو محمد عثمان اعجاز،پی ڈبلیو آء ملک یٰسین،پولیس آفسران ملک اقبال،فیاض،اسد عباس،اکرام اور درجنوں دیگر پولیس اہلکاروں اور مزدوروں کے ساتھ مل کر ٹھیکیدار کی 20 ایکڑ فصل کپاس تباہ وبرباد کر دی تھی اور عدالتی حکم امتناعی کو ماننے سے انکار کر دیا تھا جس پر ٹھیکیدار محمد سہیل حبیب نے لاہور ہائیکورٹ ملتان بنچ ملتان میں توہین عدالت کی رٹ پٹیشن دائر کی جس پر عدالت عالیہ نے مذکورہ بالا ریلوے اہلکاروں کے خلاف توہین عدالت کے نوٹسسز جاری کر دیئے ہیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -