یوسی چیئرمین کا قتل ،متحدہ لندن کے کارکنوں کا اعتراف جرم

یوسی چیئرمین کا قتل ،متحدہ لندن کے کارکنوں کا اعتراف جرم

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)ایم کیوایم پاکستان کے یوسی چیئرمین راشد ماموں کے قتل میں ملوث ایم کیوایم لندن کے گرفتار کارکنان نے مقامی عدالت میں قتل کا اعتراف کرلیا ۔منگل کو جوڈیشل مجسٹریٹ کی عدالت میں ایم کیوایم لندن کے کارکنوں کی شناختی پریڈ اور 164کے تحت اقبالی بیان قلمبند کیئے گئے۔ عینی شاہداور گواہوں نے ایم کیوایم کستان کے یوسی چیئر مین راشد عرف ماموں کے قتل میں ملوث تین ٹارگٹ کلرز کو عدالت میں شناخت کرلیا ملزمان میں ایم کیوایم لندن کے ٹارگٹ کلرز میں آصف عرف رئیس ، شاہد عزیر،محمد دانش خان شامل ہیں،ایم کیوایم لندن کے تینوں کارکنوں نے مجسٹریٹ کے سامنے یوسی چیئرمین کے قتل کا بھی اعتراف کرلیا ملزمان نے کہا کہ یوسی چیئرمین کو قتل کرنے کا ٹارگٹ خاتون رکن کہکشاں نے دیا،واردات کے بعد ایم کیوایم رابطہ کمیٹی کی رکن کہکشاں نے 3 لاکھ روپے انعام دیا، خاتون رکن نے چیئرمین کو قتل کرنے کا ٹارگٹ ایم کیوایم لندن قیادت کے حکم پر دیا،ایم کیو ایم پاکستان کے یوسی چیئر مین راشد عرف ماموں کو 30 جولائی کو شاہ فیصل جاکر قتل کیا،عدالت نے ایم کیوایم لندن کے تینوں کارکنوں کو عدالتی ریمانڈ پر جیل بھیج دیا،پولیس کے مطابق یوسی چیئرمین کے قتل میں ایم کیوایم بانی سمیت دیگر بھی نامزد ہیں۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -