لاپتہ افراد کی کمیشن رپورٹ آخری مراحل میں ہے،جمع کراتے ہی کمیشن کی سربراہی چھوڑ دوں گا،جسٹس(ر)جاوید اقبال

لاپتہ افراد کی کمیشن رپورٹ آخری مراحل میں ہے،جمع کراتے ہی کمیشن کی سربراہی ...
لاپتہ افراد کی کمیشن رپورٹ آخری مراحل میں ہے،جمع کراتے ہی کمیشن کی سربراہی چھوڑ دوں گا،جسٹس(ر)جاوید اقبال

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) جسٹس(ر)جاوید اقبال ذمہ داریاں سنبھالتے ہی پارلیمنٹ ہاﺅس پہنچ گئے ،اس موقع پر میڈیا سے غیررسمی گفتگو کرتے ہوئے چیئرمین نیب نے کہا کہ جبری لاپتہ افراد کی کمیشن رپورٹ آخری مراحل میں ہے ،رپورٹ جمع کرانے کے بعد کمیشن کی سربراہی چھوڑ دوںگا،صحافی کے سوال ”ایبٹ آباد کمیشن کا کوئی نتیجہ نہیں نکلا“ کے جواب میں جسٹس (ر)جاوید اقبال نے کہا کہ میں نے تونتیجہ نکالا،اللہ تعالی کی مدد سے تمام بڑے کیسز کو پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے ،انہوں نے کہا کہ پہلی دفعہ چیلنج کا سامنا نہیں کر رہا ، قانون کے مطابق کام کروں گا اور نیب کیسز کا بھی نتیجہ نکلے گااورانشاءاللہ تمام کام خوش اسلوبی سے ہوں گے ۔نیب کے تمام امور پر تفصیلی بریفنگ لوں گااورکسی بھی معاملے کو التوا کا شکار نہیں بننے دیں گے ۔چیئرمین نیب نے کہا کہ انکوائری کمیشن کے پاس لاپتا افراد کے 1386 کیس زیر التوا ہیں،لوگ بھاری فیسیں ادا نہیں کر سکتے،کمیشن کو قائم کرنے سے عوام کو اخراجات فری ادارہ ملا،انہوں نے کہا کہ لاپتاافراد کمیشن تمام صوبوں میں جاتا ہے،بلوچستان میں غیر ریاستی عناصر اور غیر ملکی طاقتیں ملوث ہیں، جسٹس (ر)جاوید اقبال کا کہنا تھا کہ لوگو ں کو بغیر کسی قانون کے حراست میں رکھنا ناقابل بر داشت ہے، پاکستان کوئی بنانا ریاست نہیں کہ لوگوں کو لاپتا کیا جائے۔

مزید پڑھیں:۔ریٹائرڈ جسٹس جاوید اقبال نے چیئر مین نیب کا چار ج سنبھا ل لیا

مزید :

اسلام آباد -اہم خبریں -