آئین کے آرٹیکل 190کے تحت فوج عدلیہ کے ہر حکم کو ماننے کی پابند ہے :شیخ رشید

آئین کے آرٹیکل 190کے تحت فوج عدلیہ کے ہر حکم کو ماننے کی پابند ہے :شیخ رشید
آئین کے آرٹیکل 190کے تحت فوج عدلیہ کے ہر حکم کو ماننے کی پابند ہے :شیخ رشید

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے واضح کیا ہے کہ انہوں نے عدلیہ کے پیچھے فوج کھڑی ہونے والی بات قانونی پس منظر میں کی تھی ۔ان کا کہنا تھا کہ میں نے کہا تھا کہ آرٹیکل 190کے تحت فوج عدلیہ کا ہر حکم ماننے کی پابند ہے ،اگر عدلیہ فوج کو حکم دے کہ وزیر اعظم ہاوس خالی کراﺅ تو فوج کو یہ کام کرناپڑے گا ۔انہوں نے کہا کہ آج کی فوج اور عدلیہ بدل گئی ہے ،اب نہ نظریہ ضرورت والی عدلیہ ہے اور نہ فوج میں کوئی جنرل بٹ ہے ۔پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف اور عالمی بینک نے اسحاق ڈار کو قبول کرنے سے انکار کردیا ،دونوں عالمی اداروں کا ایجنڈا ہے کہ منی لانڈرر قبول نہیں ،پاکستان معاشی بھونچال سے دو چار نظر آرہا ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ حدیبیہ پیپر چوروں کی ماں ہے تو ایل این جی کیس نانی ہے ،یہ 200ارب کا کرپشن سکینڈل ہے ۔شیخ رشید نے کہاکہ نواز شریف کو ایجنڈہ دیا گیا کہ پاک فوج کے ساتھ بھی وہ ہی کردیا جائے جو لیبیا ،عراق اور شام میں ہوا ۔

مزید :

قومی -