نام نہاد بلددیاتی الیکشن کا دوسرا مرحلہ ، مقبوضہ کشمیر میں مکمل ہڑتال

نام نہاد بلددیاتی الیکشن کا دوسرا مرحلہ ، مقبوضہ کشمیر میں مکمل ہڑتال

سرینگر(مانیٹرنگ ڈیسک ، نیوز ایجنسیاں)مقبوضہ کشمیر میں نام نہاد بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے کے موقع پربھی مکمل ہڑتال رہی۔ کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق ہڑتال کی کال سید علی گیلانی ، میرواعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل مشترکہ حریت قیادت نے دیتے ہو ئے اپنے مشترکہ بیان میں عوام سے کہا وہ بلدیاتی انتخابات کے نام پر بھارت کی طرف سے منعقد کی جانیوالی فوجی مشق سے دور رہیں ، کیو نکہ پراسراریت ،دھاندلی و رشوت اس بے سود مشق کے اہم پہلوہیں۔ انتخابی ڈرامے کو کامیاب بنانے کیلئے سکیورٹی کے نام پر سرینگر ، بڈ گا م ، اسلام آباد، کولگام ، بانڈی پورہ اور کپواڑہ میں سخت اقدامات کئے گئے ہیں جہاں دوسرے مرحلے کے نام نہاد بلدیاتی انتخابات میں آج پو لنگ ہورہی ہے ۔ مقبوضہ علاقے میں ڈھونگ انتخابات کے انعقاد کیلئے قابض انتظامیہ نے بھارتی فوج کی سینٹرل ریزروپولیس فورس کی 400اضافی کمپنیوں کے علاوہ 50ہزار اضافی فوجیوں کو تعینات کیا ہے۔پولنگ والے علاقوں میں بھارتی فوج اور پیراملٹری کے اہلکار گشت کررہے ہیں۔ قابض انتظامیہ نے سید علی گیلانی، میراعظ عمرفاروق،محمد یاسین ملک،محمد اشرف صحرائی اور قاضی یاسر سمیت تقریباًتمام حریت رہنماؤں کو گھروں میں نظربند کردیا ہے۔ واضح رہے دوسرے مرحلے کے ڈھونگ انتخابات میں جموں کی 214اور وادی کی 49سمیت مجمو عی طورپر 263 وارڈوں میں پولنگ جاری ہے ۔ڈھونگ انتخابات میں 65 امیدوار بلا مقابلہ منتخب ہو گئے ہیں جبکہ 40وارڈوں میں کوئی بھی امیدوار سامنے نہیں آیا ہے ۔

مزید : صفحہ آخر