ڈالر کو 200 روپے تک لے جانے کی سازش ہو رہی ہے،مہناز رفیع

ڈالر کو 200 روپے تک لے جانے کی سازش ہو رہی ہے،مہناز رفیع

لاہور(نمائندہ خصوصی )سابق رکن قومی اسمبلی بیگم مہناز رفیع نے کہا ہے کہ عمران خان کی حکومت کوفلاپ کرنے کے لئے نواز اور شہباز گروپ کے تاجروں نے اوپن مارکیٹ سے ڈالر اٹھالئے جس سے ڈالر مہنگا ہو گیا اور اس کا اثر سونے پر بھی پڑا، بیگم مہناز رفیع نے کہا کہ ڈالر کو 200 روپے تک لے جانے کی سازش ہو رہی ہے۔

تاکہ عمران خان کے وہ منصوبے جو قوم کو خوشحالی کی طرف لے جائے ان منصوبوں کو ناکام بنایا جائے۔

انہوں نے کہا کہ شریف خاندان کہتا ہے ہم نہیں تو پاکستان نہیں۔ 35 سال اقتدار میں رہنے کے بعد بھی دولت کی ہوس کم نہیں ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ آج ملک میں کرپشن کا بازار گرم ہے جو شریف خاندان کا کمال ہے، تحریک انصاف کی رکن شمسہ علی نے کہا کہ ہماری حکومت کو تباہ کن معیشت ملی، حقیقت میں خزانہ بالکل خالی تھا، شریف خاندان نے جاتے جاتے قرضوں کا انبار لگا دیا اور خزانے کی تمام رقم لوٹ کر لے گئے، ڈالر کی مہنگائی پر انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان آئی ایم ایف کے پاس جانا نہیں چاہتے تھے ، ابھی تک کوئی تحریری معاہدہ نہیں ہوا ہے، اگر آئی ایم ایف سے قرضہ لیا تو بہت کم شرائط پر لئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ شروع کا وقت مشکل ہے، مگر جلد اچھا وقت آئے گا،

مزید : میٹروپولیٹن 1