غوری میزائل سسٹم کے کامیاب تجربے پر سائنسدان مبارکباد کے مستحق ہیں، شوکت ورک

غوری میزائل سسٹم کے کامیاب تجربے پر سائنسدان مبارکباد کے مستحق ہیں، شوکت ورک

لاہور(جنرل رپورٹر) ڈاکٹر اے کیو خان ہسپتال ٹرسٹ کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر شوکت ورک نے پاکستان کے غوری میزائل سسٹم کی ٹریننگ لانچ کے کامیاب تجربے پر سائنسدانوں اور پاک فوج کو مبارک باد دی ہے انہوں نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ پاکستان کا پہلا غوری بیلاسٹک میزائل جو 1300سو کلومیٹر تک روایتی اور جوہری وار ہیڈ لیجانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔

اس کا پہلا تجربہ 6اپریل 1998کو ٹلہ جوگیاں جہلم میں کامیابی سے کیا گیا تھا جس کے خالق ڈاکٹر عبدالقدیر خان ہیں قوم ان کی شکر گزار ہے کہ انہوں نے قوم کو غوری میزائل اور 28مئی 1998کو ایٹم بم کے کامیاب تجربے کے بعد قوم کو یہ تحفے دے کر ملکی دفاع کو ناقابل تسخیر بنا دیا ہے ۔

جس پر پوری پاکستانی قوم ڈاکٹر قدیر خان کو ہدیہ تہنیت پیش کرتی ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان ایک ایٹمی قوت ہے اور پاک فوج ملکی دفاع کی بھرپور صلاحیت کی حامل ہے اور دنیا کی کوئی بھی طاقت پاکستان کی طرف میلی آنکھ اٹھا کر دیکھنے کی جرأت نہیں کر سکتی۔دریں اثناء انہوں کہا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر خان کے حوالے سے غوری میزائل کے کامیاب تجربے پر جو تہنیتی پیغامات مجھے بھیجے گئے ہیں میں ان سب حضرات کا بے حد ممنون ہوں ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1