ہر حال میں آسان اقساط پر قرضے لینے ہوں گے

ہر حال میں آسان اقساط پر قرضے لینے ہوں گے

سابق وزیر خزانہ ڈاکٹر سلمان شاہ نے کہا ہے کہ زر مبادلہ کے ذخائر میں کمی کی بنیادی وجہ خسارہ ہے جس میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے اور یہ اس وقت تک ہوتا رہے گا جب تک دس سے بارہ ارب ڈالر کا سالانہ سرکلر ڈیڈ کم نہیں ہوتا گھبرانے کی ضرورت نہیں حکومت نے اس کو کم کرنے کے لئے عملی اقدامات کئے تو یہ کم ہو سکتا ہے ۔وہ ایشو آف دی ڈے میں گفتگو کررہے تھے ۔انہوں نے کہا کہ اس کے لئے حکومت اگر واقعی زر مبادلہ کے ذخائر کا خاتمہ چاہتی ہے تو اس کے لئے انہیں ہر حال میں آسان اقساط پر قرضے لینے ہوں گے یا پھر دوست ممالک سے مدد لینا ہو گی اور اس کا تیسرا بڑا حل یہ ہے کہ سرمایہ کاری لائی جائے جس کے لئے یہ اس وقت تک ممکن نہیں ہو سکتا جب تک سرمایہ کار کے لئے ساز گار ماحول فراہم نہیں کیا جا سکتا یا پھر ایک اور صورت ہے کہ بیرون ممالک رہائش پذیر پاکستانیوں سے وزیراعظم یا پھر ان کی قابل اعتماد ٹیم رابطے کرے اور انہیں وطن دالر بھجوانے کی اپیل کرے بصورت دیگر زر مبادلہ کے ذخائر مزید کم ہو جائیں گے۔

ڈاکٹر سلمان شاہ

مزید : صفحہ اول