ممبران اسمبلی کیخلاف انتخابی عذرداریوں میں تکنیکی اعتراضات ختم،مختلف اپیلوں کی آج سماعت

ممبران اسمبلی کیخلاف انتخابی عذرداریوں میں تکنیکی اعتراضات ختم،مختلف ...

ملتان ( خبر نگار خصوصی)الیکشن ٹربیونل ہائیکورٹ ملتان بینچ نے ممبران اسمبلی کے خلاف انتخابی عذرداریوں میں مختلف تکنیکی اعتراضات ختم(بقیہ نمبر49صفحہ12پر )

کرتے ہوئے اپیلوں کوباقاعدہ سماعت کیلئے آج پیش کرنیکاحکم دیاہے۔ فاضل عدالت میں قومی حلقہ این اے157 ملتان سے سید علی موسیٰ گیلانی نے پاکستان تحریک انصاف کے ممبرقومی اسمبلی مخدوم زین حسین قریشی،صوبائی حلقہ 212 ملتان سے میاں شہزادمقبول بھٹہ نے پی ٹی آئی کے ممبرصوبائی اسمبلی محمدسلیم اختر،صوبائی حلقہ 220 شجاع آباد سیمیاں کامران عبداللہ نے پی ٹی آئی کے ممبر صوبائی اسمبلی میاں طارق عبداللہ ،صوبائی حلقہ 223 ملتان سے امیدوارمحمداکرم کنہوں نے ممبرصوبائی اسمبلی نغمہ مشتاق لانگ ،ممبرصوبائی حلقہ 208 خانیوال سے جمشیدحیات نے ممبر صوبائی اسمبلی بابرحسین عابد،صوبائی حلقہ 225 لودھراں سے طاہرحسین نے ممبرصوبائی اسمبلی پیرزادہ محمدجہانگیربھٹہ،صوبائی حلقہ 232 وہاڑی سے بلال اکبربھٹی نے ممبرصوبائی اسمبلی محمداعجاز حسین کے خلاف انتخابی عذرداریاں دائرکی تھیں۔دریں اثناء الیکشن ٹربیونل ہائیکورٹ ملتان بینچ نے جنوبی پنجاب سے منتخب ممبران اسمبلی کو دھاندلی ہونے اوردیگراعتراضات کی بناء پرنااہل قراردے کردوبارہ انتخابات کرانے کی درخواستوں پر ممبران اسمبلی اورالیکشن کمیشن کونوٹس جاری کرنیکاحکم دیاہے۔فاضل عدالت میں صوبائی حلقہ 203 خانیوال سے ناکام امیدواراکبرحیات ہراج نے ممبرصوبائی اسمبلی سیدخاورعلی شاہ،صوبائی حلقہ 207 خانیوال سے ناکام امیدوارعامرحیات ہراج نے ممبرصوبائی اسمبلی سیدعباس علی،صوبائی حلقہ 224 لودھراں سے ناکام امیدوارمحمدعامراقبال نے ممبرصوبائی اسمبلی زوارحسین وڑائچ،صوبائی حلقہ 226 لودھراں سے(ن)لیگ کے ناکام امیدوارسید محمدرفیع الدین بخاری نے ممبرصوبائی اسمبلی نذیراحمدخان ،صوبائی حلقہ 227 لودھراں سے ناکام امیدوارنواب امان اللہ خان نے ممبرصوبائی اسمبلی محمدصدیق خان بلوچ،صوبائی حلقہ 228 کہروڑپکاسے ناکام امیدواررانامحمدفرازنون نے ممبرصوبائی اسمبلی شاہ محمد کے خلاف انتخابی عذرداریاں دائرکی تھیں جن میں ناکام امیدواروں کودھاندلی سے ہرانے پردوبارہ انتخابات کرانے کی استدعاکی گئی تھی جس میں فاضل ٹربیونل نے کامیاب امیدواروں کو22 اکتوبرکوپیش ہونے کے لئے نوٹس جاری کرنیکاحکم دیاہے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر