شانگلہ میں ڈینگی وائرس کے حملے جاری ، مزید 4افراد میں تصدیق

شانگلہ میں ڈینگی وائرس کے حملے جاری ، مزید 4افراد میں تصدیق

الپوری(ڈسٹرکٹ رپورٹر)شانگلہ : بشام میں ڈینگی وباء جاری مزید 4افراد میں وائرس کی تصدیق ہو گئی،مریضوں کی تعداد 158تک جا پہنچی،ہسپتال اہلکاروں ،تحصیل انتظامیہ اور مقامی مشران کا ڈینگی مچھر کے اگاہی کے حوالے سے اقدامات شروع ،بشام بازار نچلے کالونیوں میں پولیس کے ہمراہ اپریشن شروع۔کھلی ٹینکیوں اور مچھر پیدا کرنے والے ٹائیروں اور دیگر گندگی کے ڈھیر رکھنے والے کے خلاف کاروائی ۔ متعدد مقدمات درج کر دئے گئے۔ ہسپتال میں ڈینگی ٹیسٹ مشین ٹھیک کر دیا ہے ، ڈینگی کے ادویات اوردیگر سہولیات دے رہے ہیں ۔ہسپتال انتظامیہ کا دعویٰ۔ہسپتال میں سہولیات کا فقدان ہیں ،تحصیل ہسپتال میں ڈاکٹروں سمیت پینے کے صاف پانی ،واش روم اور بجلی نہ ہونے کے برابر ہیں،ہماے مریض تڑپ رہے ہیں کوئی پُرسان حال نہیں ۔انتظامیہ اور محکمہ صحت ٹھس سے مس نہیں ہو رہیں۔حکومت سنجیدگی سے غور کریں۔اہلیان بشام کا دہائی۔ شانگلہ کے سب تحصیل بشام میں تین ہفتوں سے شروع ہونے والی ڈینگی وائیرس کے مریضوں میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہیں ،ہر دن ہسپتال میں ڈینگی کے نئے کیسیزسامنے ارہے ہیں ،بدھ کے روز ہسپتال میں مزید چار افراد میں وباء کی تصدیق ہو گئی ا س کے بعد مریضوں کی تعداد 158تک پہنچ گئے ۔ادھر ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ ہسپتال میں خراب ڈینگی وائرس کے ٹسٹ مشین کو ٹیھک کر دیا گیا ہیں اور اب سرکاری مشین کے زریعیٹسٹ کئے جا رہے ہیں گزشتہ ہفتے سے بشام کے مختلف ڈینگی سے متاثرہ کالونیوں میں گھر گھر مہم شروع کر دی تھی تاہم مشکلات درپیش تھے ،ڈینگی سے بچاؤ کے لئے بشام شہر سمیت مضافات اور خا ص طورمتاثرہ علاقے میں ڈینگی سپرے کرانا چائے۔متاثرہ کالونیوں میں گھر گھر اگاہی مہم مزید تیز کرنا ہو گا ،آج پولیس ،مقامی انتظامیہ ، مشران علاقہ اور نمائندوں کے ہمراہ اپریشن شروع کر دی ہیں جس میں ملیریا سپر وائزر ،ایل ایچ ڈبلیوز اور محکمہ صحت کے اہلکار شامل ہیں کاروائی کر رہے ہیں۔ ڈینگی سپرے کرنا ہو گا بصورت دیگر مریضوں کی تعداد میں اضافے کا خدشہ ہیں ۔بشام کے مقامی مکینوں کا کہنا ہے کہ ہسپتال میں سہولیات کا فقدان ہیں ،تحصیل ہسپتال میں ڈاکٹروں سمیت پینے کے صاف پانی ،واش روم اور بجلی نہ ہونے کے برابر ہیں،ہماے مریض تڑپ رہے ہیں کوئی پُرسان حال نہیں ، ڈینگی مریضوں کے لئے صرف ایک وارڈ کے علاوہ سہولیات میسر نہیں ،ہسپتال حکام ہیلے بہانے کر رہے ہیں ڈینگی پر خصوصی قابو پانے کے لئے حکومتی اقدمات نہ ہونے کے برابر ہیں ،تین ہفتوں سے علاقے میں وباء شروع ہو چکی ہے اور روزبروز اس میں اضافہ ہو رہا ہے جو تشویشناک ہیں،21دنوں سے مرض پر قابو پانے کے لئے نہ تو سپرے کیا گیا اور نہ اگاہی مہم ،منتخب نمائندے صورت حال پر خواب خرگوش کے مزے لوٹ رہے ہیں۔ضلعی انتظامیہ شانگلہ اور محکمہ صحت ٹھس سے مس نہیں ہو رہیں۔ صوبائی حکومت مرض پر قابو پانے کیلئے سنجیدگی سے غور کریں۔

مزید : کراچی صفحہ اول