حکومت افریقی ممالک سے فروغ تجارت کیلئے کوشاں

حکومت افریقی ممالک سے فروغ تجارت کیلئے کوشاں

  



 راولپنڈی (کامرس ڈیسک)پاکستان کو افریقی مارکیٹوں تک رسائی کے لیے حکومت آسانیاں پیدا کر رہی ہے، فوکس افریقہ پالیسی کے تحت افریقی ملکوں کے ساتھ تجارت کا فروغ اور دو طرفہ تجارت میں حائل رکاوٹیں دور کی جا رہی ہیں۔تجارتی سرگرمیوں کے فروغ میں آر سی سی آئی کا کردار مثالی ہے۔راولپنڈی چیمبر کے زیر اہتمام افریقی ممالک میں نمائش اور بزنس کانفرنس کے انعقاد کے لیے وزارت کامرس ہر ممکن تعاون اور معانت کرے گی۔ ان خیالات کا اظہار جوائنٹ سیکرٹری کامرس برائے افریقہ ماریہ قاضی نے راولپنڈی چیمبر آف کامرس کے صدر صبور ملک کی قیادت میں وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ وفد میں HAP کے صدر فہد برلاس اور چیئرمین ریجنل ٹریڈ خورشید برلاس بھی شامل تھے۔ جوائنٹ سیکرٹری نے رواں سال راولپنڈی چیمبر کے زیر اہتمام بزنس افریقہ فورم کے کامیاب انعقاد پر چیمبر کی کاوشوں اور فعال کردار کو سراہا۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے تجارت بڑھانے کے لیے کئی اقدامات کیے ہیں، دو طرفہ نمائشوں اور وفود کے تبادلوں کے ذریعے باہمی تجارت اور روابط میں اضافہ کیا جاسکتا ہے۔صدر چیمبر صبور ملک نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ چیمبر ملکی برآمدات میں اضافے اور پاکستان کا حقیقی اور مثبت امیج دنیا کے سامنے لانے کے لیے اندرون ملک اور بیرون ملک نمائشیں اور بزنس کانفرنس کا انعقاد کرتا ہے۔ چیمبر تجارتی سرگرمیوں کے فروغ کے لیے ایک فعال کردار ادا کر رہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مصر کا ایک تجارتی وفد اگلے ہفتے آرسی سی آئی دورہ کرے گا اور بی ٹو بی ملاقاتیں بھی کرے گا۔

مزید : کامرس


loading...