مولانا کے احتجاج کی دھمکی نے حکومت کی ہوا نکال دی‘ امیر العظیم

  مولانا کے احتجاج کی دھمکی نے حکومت کی ہوا نکال دی‘ امیر العظیم

  



ڈیرہ غازیخان (نمائندہ خصوصی)جماعت اسلامی کے مرکزی سیکرٹری جنرل امیر العظیم نے کہا ہے کہ مولانا فضل الرحمن کاآزادی مارچ کامیاب ہوتا دکھائی دے رہا ہے ان کے احتجاج کی دھمکی نے پی ٹی آئی کی ساری ہوانکال دی ہے جبکہ کنٹینراور کھانے دینے والوں کی ساری ہوائیاں اڑی(بقیہ نمبر39صفحہ7پر)

ہوئی ہیں ڈیرہ غازی خان میں میڈیا کے نمائندوں گفتگوکررہے تھے اس موقع پر وفاقی مجلس شوری کے رکن شیخ عثمان فاروق،ضلعی امیر جاوید اقبال بلوچ،منیر احمد کلاچی،پروفیسر عطا محمد جعفری،شیخ عبدالستار،شیخ سعد فاروق اور غنا محمد گجر سمیت دیگر موجود تھے امیر العظیم نے کہا کہ دوسال قبل عمران خان کا جوموقف تھا وہی بیانہ آج مولانا فضل الرحمن کا ھے جبکہ دوسال پہلے مولانا فضل الرحمن نے منتخب جمہوری حکومت کرتے ہوئے کہا تھا کہ وہ احتجاج اور دھرنوں کے ذریعہ حکومت کے خاتمہ کے مخالف ہیں اور آج مولانا فضل الرحمن کا موقف بدل گیاھے تاہم جماعت اسلامی کل بھی جمہووری عمل کیساتھ کھڑی تھی اور آج بھی اپنے موقف پر قائم ھے انہوں نے کہا موجودہ حکومت بغیر سوچے سمجھے پالیسیاں ترتیب دے رہی ھے اور حکومت نے عوام کو اپنی کارکردگی سے مایوس کیا ھے -- عوامی سطح پر حکومت بارے کہیں بھی اطمینان دکھائی نہیں دے رہا انہوں نے کہا کہ پانامہ میں نوازشریف سمیت دیگر شریک 435 کرپٹ افراد کے احتساب سے متعلق اپنے مطالبہ پر آج بھی قائم ہیں اور اس حوالہ سے ہمارا مقدمہ سپریم کورٹ میں التواء کاشکار ھے امیرالعظیم کاکہناتھاکہ کہ کشمیریوں کی عملی اقدامات کے ذریعہ حمایت کی اشد ضرورت ھے حکومت تقریروں کے بجائے نہتے کشمیریوں کی عملی طور پر مدد کرے اور حکومت اقوام متحدہ سے کشمیر ریفرنڈم کمشنر کی دوبارہ تعیناتی کروائے۔

امیرالعظیم

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...