عدالتی احکامات نظرانداز‘ نجی سکول فیس وصولی کی دستاویزات تاحال جمع نہ کرا سکے

عدالتی احکامات نظرانداز‘ نجی سکول فیس وصولی کی دستاویزات تاحال جمع نہ کرا ...

  



ملتان(سٹاف  رپورٹر) پرائیویٹ سکولز نے زائد فیسوں کے معاملے میں عدلیہ کے احکامات نظر انداز کر دئیے۔ بتایاگیا ہے کہ سْپریم کورٹ آف پاکستان کے فیصلے کے مطابق پرائیویٹ سکولز پرنسپلز ومالکان کے ساتھ میٹنگ زیر صدارت چیف(بقیہ نمبر48صفحہ12پر)

 ایگزیکٹو آفیسر ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی ملتان منعقد ہوئی جس میں پرائیویٹ سکولز مالکان وپرنسپلز کو ہدایت جاری کی گئیں کہ وہ سْپریم کورٹ آف پاکستان اور لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے جو کہ فیس وصول کرنے کے حوالے سے ہیں‘ان پر سختی سے عمل درآمد کریں‘زائد فیسز ہر گز وصول نہ کریں اور بچوں کے والدین سے وصول شدہ فیسیں، جنوری 2017 کے مطابق ری کیلکولیشن کرکے سال 2018و 2019 تک کی دستاویزی تفصیل‘ فیس واؤچرز ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی و ڈسٹرکٹ رجسٹریشن اتھارٹی کے آفس میں اندر معیاد ایک ہفتہ جمع کروائیں لیکن پرائیویٹ سکولز کی طرف سے مطلوبہ دستاویزی تفصیل و معلومات تاحال موصول  نہیں ہوسکیں  لہذاایجوکیشن اتھارٹی کی طرف سے تمام پرائیویٹ سکولز کو ہدایت کی گئی ہے کہ مطلوبہ معلومات‘دستاویزی تفصیل3روز کے اندر فراہم کریں۔  عدم تعمیل کی صورت میں پنجاب پرائیویٹ ایجوکیشنل اِنسٹی ٹیو شنز (پروموشنز اینڈ ریگولیشنز) ا?رڈینینس 1984(حالیہ ترمیم شدہ2016-17) کے سیکشن9اور سیکشن11کے تحت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

فیس وصولی

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...