نااہل اور ناجائز حکومت کا جانا ٹھہر گیا‘ مولانا فضل الرحمن

      نااہل اور ناجائز حکومت کا جانا ٹھہر گیا‘ مولانا فضل الرحمن

  



کوٹ ادو (تحصیل رپورٹر) جمعیت علمائے اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمٰن نے کہا کہ نا اہل اور ناجائز حکومت کا جانا ٹھہر گیاہے اور اب یہ جنگ حکومت کے خاتمے پر ہی ختم ہوگی، ہماری جنگ کا میدان پورا ملک ہوگا، ہماری حکمت عملی میں جمود نہیں ہوگا، بی اور سی پلان کی طرف بھی جائیں، ہماری حکمت عملی میں جنون نہیں ہوگا، صورتحال سے نمٹنے کیلئے حکمت عملی تبدیل کرتے رہیں گے،ان خیالات کا (بقیہ نمبر31صفحہ12پر)

اظہار انہوں نے جمعیت علماء اسلام ضلع مظفر گڑھ کے قائم مقام امیر محمد حذیفہ شاکرکے ساتھ اسلام آباد اپنی رہائش گاہ پر تفصیلی ملاقات میں کیا،انہوں نے کہا کہ ملک اس وقت معاشی لحاظ سے ڈوب رہا ہے، اس وقت ملک کا وجود خطرے میں ہے،ملک کی بقاء اور ملک کا وجود رسک پر ہے،ہم نے عا م عادمی کی آواز بننا ہے، ہر پاکستانی کی آواز بننا ہے اور اس کے کرب میں اس کا ترجمان بننا ہے،مولا نا فضل الرحمٰن نے کہا کہ ہمارا آزادی مارچ ہر طرح سے پر امن اور آئینی ہوگاہم اس حکومت کے خاتمے تک اسلام آباد میں رہیں گیاپوزیشن جماعتوں کے رہنماؤں پر مشتمل رہبر کمیٹی نے اپنا متفقہ بیانیہ اور مطالبات پر اتفاق رائے قائم کر لیا ہے اپوزیشن میں شامل تمام سیاسی جماعتیں آزادی مارچ میں جمعیت علماء اسلام کے شانہ بشانہ ہونگی،اس موقع پرجمعیت علماء اسلام ضلع مظفر گڑھ کے قائم مقام امیر محمد حذیفہ شاکرنے مولانا فضل الرحمن کو ضلع مظفر گڑھ میں آزادی مارچ کے سلسلے میں ہونے والی تیاریوں سے بھی آگاہ کیا جس پرمولانا فضل الرحمن نے اطمینان کا اظہار کیا، انہوں نے سابق رکن قومی اسمبلی جمشید دستی کی جانب سے آزادی مارچ کی حمایت اور بھرپور شرکت کے فیصلے کا خیر مقدم کیا، اس موقع پر متحدہ مجلس عمل کے مرکزی ترجمان مولانا اویس شاہ نورانی اور مرکزی رابطہ کمیٹی کے ممبر خواجہ مدثر محمود بھی موجود تھے۔

فضل الرحمن

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...