جوڈیشل افسروں،ملازموں کو سکیل کیمطابق سرکاری گھرالاٹ کرنیکاحکم

جوڈیشل افسروں،ملازموں کو سکیل کیمطابق سرکاری گھرالاٹ کرنیکاحکم

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے عدالت عالیہ کے افسروں اور ملازموں کو سکیل کے مطابق سرکاری گھرالاٹ کرنے کاحکم دے دیا۔جسٹس مسعود جہانگیر نے یہ حکم سینئرافسر محمداکمل خان کی درخواست پرجاری کیاہے،عدالت عالیہ کی جانب سے 10سال بعد اس کا فیصلہ سنا یا گیاہے،عدالت نے حکومت پنجاب کو عدالتی حکم پرفوری عمل کرنے کابھی حکم دیاہے،عدالت نے ایڈیشنل چیف سیکرٹری پنجاب سمیر سید کی یقین دہانی پر دائردرخواست نمٹادی۔درخواست گزار وں کے وکیل اظہر صدیق نے موقف اختیار کررکھا تھا کہ سرکاری گھروں کی الاٹمنٹ میں امتیازی سلوک روا رکھا گیا ہے،گھروں کی الاٹمنٹ سے متعلق پالیسی کو نظرانداز کیا جا رہا ہے،من پسند افراد کو گھر الاٹ کر کے دیگر کو نظرانداز کیا جا رہا ہے،ایڈیشنل چیف سیکرٹری نے عدالت کو بتایا کہ پالیسی میں ترمیم ہونے کے بعد سکیل کی بجائے عہدے کے مطابق گھر الاٹ کئے جاتے ہیں جس پر عدالت نے کہا کہ سکیل اور عہدے کاتعین ہائیکورٹ نے کرنا ہے انتظامیہ نے نہیں۔ 

سرکاری گھر

مزید : صفحہ آخر


loading...