پیپلز پارٹی کا ملک گیر جلسے جلسوں کا اعلان، فضل الرحمان کا بلاول سے رابطہ آزادی مارچ کی حمایت پر شکریہ ادا کیا 

    پیپلز پارٹی کا ملک گیر جلسے جلسوں کا اعلان، فضل الرحمان کا بلاول سے رابطہ ...

  



کراچی، اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری 18 اکتوبر کو کراچی میں جلسے سے ملک گیر جلسے جلوسوں کا آغاز کریں گے۔اس کے بعد چیئرمین بلاول بھٹو زرداری 23 اکتوبر کو تھرپارکر میں جلسے سے خطاب کریں گے جبکہ 26 اکتوبر کو سندھ پنجاب کے بارڈر کشمور کے مقام پر احتجاجی جلسہ کریں گے۔سندھ کے بعد بلاول کی احتجاجی تحریک کا اگلا قدم جنوبی پنجاب ہوگا، وہ وہاں کے مختلف اضلاع میں جلسے اور ریلیوں سے خطاب کرتے ہوئے وسطی پنجاب میں داخل ہونگے،وسطی پنجاب کے بعد پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین خیبر پختونخوا جائیں گے جبکہ 30 نومبر کو آزاد کشمیر کے شہر مظفر آباد میں پارٹی کا یوم تاسیس منائیں گے،دوسری طرف  جمعیت علمااسلام (ف) کے امیر مولانا فضل الرحمان نے بلاول بھٹو سے ٹیلی فونک رابطہ کرکے آزادی مارچ کی حمایت پر شکریہ ادا کیا۔ ذرائع کے مطابق امیرجے یو آئی (ف)مولانا فضل الرحمان نے چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو سے رابطے میں باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا اور آزادی مارچ میں پیپلز پارٹی کی حمایت پر ان کا شکریہ ادا کیا۔یاد رہے گزشتہ روز پاکستان پیپلزپارٹی نے جے یو آئی (ف) کے آزادی مارچ کی حمایت کا اعلان کیا تاہم دھرنے کی مخالفت کی۔ اس بات کا اعلان چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے کور کمیٹی کے اجلاس کے بعد پی پی میڈیا سیل میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیاتھا۔بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا پیپلز پارٹی مولانا فضل الرحمن کے آزادی مارچ کی حمایت کا اعلان کرتی ہے جس جگہ جس شہر جس وقت آزادی مارچ ہوگا پیپلزپارٹی استقبال اور مکمل سپورٹ کرے گی۔ انہوں نے کہا ہم نے اجلاس میں ملک کی مجموعی سیاسی، معاشی صورتحال پر غور کیا، خارجہ پالیسی کا جائزہ لیا۔چیئرمین پیپلزپارٹی نے حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کٹھ پتلی حکومت کو عوام کا کوئی احساس نہیں، نااہل اور نالائق حکومت نے معیشت کو تباہ کر دیا، حکومت میں عوامی مسائل حل کرنے کی اہلیت نہیں، ہمیں حالات کو ٹھیک کرنے کیلئے سیاسی جماعتوں کیساتھ ملکر کام کرنا ہوگا، سلیکٹڈ حکومت سلیکٹرز کو خوش رکھنے میں مصروف رہتی ہے، ملک میں جمہوریت کو بحال کرنا مسائل کا واحد حل ہے۔

پی پی پی 

مزید : صفحہ اول


loading...