وزیراعظم عمران خان سعودی عرب ایران کشیدگی کم کرانے کیلئے متحرک،اتوار کو ایران دورے کا امکان

وزیراعظم عمران خان سعودی عرب ایران کشیدگی کم کرانے کیلئے متحرک،اتوار کو ...
وزیراعظم عمران خان سعودی عرب ایران کشیدگی کم کرانے کیلئے متحرک،اتوار کو ایران دورے کا امکان

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب ایران کشیدگی کم کرانے کی کوششیں تیز کردی ہے، وزیراعظم اتوار کو ایرانی صدرحسن روحانی سے ملاقات کریں گے، ملاقات کے فوری بعد سعودی عرب روانگی کا امکان ہے۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب،ایران میں ثالثی کی کوششیں شروع کردی ہے ، سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم کی اتوارکوایرانی صدرحسن روحانی سے ملاقات ہوگی اور ملاقات کے فوری بعدسعودی عرب روانگی کاامکان ہے۔دورہ سعودی عرب میں وزیراعظم سعودی قیادت سے ایرانی صدر حسن روحانی سے ملاقات کی پیشرفت پربات کریں گے۔

وزیراعظم عمران خان سعودی عرب میں فیوچرسرمایہ کاری انیشی ایٹو میں شریک ہوں گے، وزیراعظم کو کانفرنس میں شرکت کی دعوت سعودی فرمانروا نے دی ہے، سرمایہ کاری سمٹ 29 سے 31 اکتوبر تک ریاض میں منعقد ہوگی جبکہ بھارت کے وزیراعظم کو بھی سمٹ میں شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔سفارتی ذرائع کے مطابق اہم مسلم لیڈرممالک میں کشیدگی اور تناؤختم کرنے کے خواہاں ہیں، ایران نے ثالثی قبول کرکے تناؤکم کرنے کا عندیہ دیا جا چکاہے۔

خیال رہے پاکستان سعودی عرب اور ایران کشیدگی میں ثالثی کا کردار ادا کررہا ہے، سعودی ولی عہدشہزادہ محمدبن سلمان نےوزیراعظم سے ثالثی کیلئے کہا تھا جبکہ پاکستان ماضی میں بھی سعودی،ایران تناؤختم کرنے کیلئے کئی بارکوششیں کرچکا ہے۔یاد رہے امریکی اخبار نے دعویٰ کیا تھا کہ ایران اور سعودی عرب کے درمیان خفیہ مذاکرات کا آغاز ہوچکا ہے، مذاکرات اگرچہ بالواسطہ ہیں لیکن اس کے باوجود اسے شاندار پیشرفت کہا جاسکتا ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد