پیپلزپارٹی کو ووٹ نہ دینے پر ہمیں پولیس کے ذریعے انتقام کانشانہ  بنایاجارہاہے ، عمر کوٹ کے نواحی علاقے کے مکین پھٹ پڑے

پیپلزپارٹی کو ووٹ نہ دینے پر ہمیں پولیس کے ذریعے انتقام کانشانہ  ...
پیپلزپارٹی کو ووٹ نہ دینے پر ہمیں پولیس کے ذریعے انتقام کانشانہ  بنایاجارہاہے ، عمر کوٹ کے نواحی علاقے کے مکین پھٹ پڑے

  



عمرکوٹ(سید ریحان شبیر ) عمرکوٹ سے ملحقہ تھر کی یونین کونسل سہراب نوہڑی میں گاؤں کے لوگوں نے  شکوہ کیا ہے کہ پولیس کےبھاری اٹالوں پولیس گردی ہمیں سیاسی انتقام کانشانہ بنایاجارہاہےاورپیپلزپارٹی کوووٹ نہ دینے کی سزادی جاری ہے۔  تفصیلات کےمطابق  عمرکوٹ کی  یونین کونسل کپلور کے گاوں سہراب نوہڑی میں  محکمہ ریونیو اور پولیس اہلکاروں کی بھاری جمعیت کادھاوا  تھر کے گاوں میں پولیس موبائل کے سائرن کی گونج علاقہ مکینوں میں خوف و ہراس چھاگیا ۔ گائوں کے مکینوں نے  محکمہ ریونیو کے عملے اور پولیس اہلکاروں کی آباد کھیتوں کو  تلف کرنے کا الزام عائد کرتےہوئے کہا ہمیں سیاسی انتقامی کاروائی کا نشانہ بنایا جارہاہے گزشتہ الیکشن میں مبینہ طور  پر   پی پی کے امیدوار  کو ووٹ نہ دینے کی سزا دی جارہی ہے انہوں نے مزید کہا کہ پولیس اور ریونیو ملازمین کی ہٹ دھرنی اور لاٹھی چارج دوران  دو  خواتین رحمت    زوجہ امید علی نہڑی اور صلیحاں نھڑی  شدید زخمی ہوگئیں جبکہ اس معاملے پر ڈپٹی کمشنر ندیم الرحمان میمن سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے کہا کہ پولیس اور ریونیو عملے نے گاوں کے  مکینوں کی شکایت پر انکوائری کرنے اور معاملے کو حل کرنے گئے تھے لیکن پہلے سب کچھ عناصر نے ہمارے کام میں روڑے اٹکائے رکاوٹ ڈالی  اور ریونیو عملے پر حملہ کیا تاہم ہمیں پھر وہاں عملے کو    واپس آنا پڑا یہ امر قابل ذکرہےکہ  کچھ روز قبل  بھی گاوں سہراب نہڑی میں زمین پر قبضے خلاف میڈیا پر بھی رپورٹ کیا گیا تھا جبکہ دوسری طرف پولیس تشدد سے متاثرہ لوگوں کا کہنا تھا کہ ہمیں پیپلزپارٹی کے امیدوار کو گذشتہ الیکشن میں ووٹ نہ دینے کی سزا اور سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔

مزید : علاقائی /سندھ /عمرکوٹ


loading...