وزیراعظم کی جانب سے جس لنگر کا افتتاح کیا گیا کیا وہاں حکومت کھانا کھلا رہی ہے ؟

وزیراعظم کی جانب سے جس لنگر کا افتتاح کیا گیا کیا وہاں حکومت کھانا کھلا رہی ...
وزیراعظم کی جانب سے جس لنگر کا افتتاح کیا گیا کیا وہاں حکومت کھانا کھلا رہی ہے ؟

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعظم عمران خان نے اسلام آباد میں چند دن قبل احساس سیلانی لنگر کا افتتاح کیا اور کہا کہ اس طرح کے 112 مزید لنگر خانے کھولے جائیں گے جہاں غریب لوگ مفت میں اچھا کھانا کھا سکیں گے تاہم اب ” دی انڈی پینڈنٹ اردو “ نے دعویٰ کیا کہ یہ لنگر خانہ کھولنے میں حکومت کاکردار صرف اتنا ہے کہ اس کیلئے سیلانی ٹرسٹ کو زمین فراہم کی گئی ہے باقی کھانے پینے کا انتظام ٹرسٹ خود کرتا ہے ۔

دی انڈی پینڈنٹ اردو نے اسلام آباد کے علاقے جی نائن میں قائم کیے گئے لنگر خانے کا دورہ کیا اور سیلانی ٹرسٹ اسلام آباد کے منیجر ” عمیر اصغر “ کے ساتھ خصوصی گفتگو کی جس دوران نمائند ے نے ان سے سوال کیا کہ حکومت کا اس سارے سیٹ اپ میں کیا کردار ہے جس پر سیلانی ٹرسٹ کے منیجر نے جواب دیا کہ ” حکومت کی طرف سے ہمیں یہ پلیٹ فارم فراہم کیا گیا باقی کھانے پینے کا انتظام سیلانی ٹرسٹ خود کرے گا ،ہاں لنگر خانہ کھولنے کے لیے جگہ ضرور حکومت نے دی ہے۔“

ڈاکٹر ثانیہ نشتر سے وہاں کھانا کھانے والے افراد سے اس پروجیکٹ کے بارے میں رائے لی تو ان میں سے ایک شخص نے کہا کہ اگر میرے گھر میں پانچ بچے ہیں، اگر کاروبار نہیں ہو گا تو وہ کیا کھائیں گے، کیا پئیں گے؟اسی طرح وہاں موجود ایک مزدور کا کہنا تھا کہ یہاں استطاعت رکھنے والے اور غریب لوگ سب آ کر کھا لیں گے، حکومت کو اس طرح کے کاموں میں پیسہ نہیں لگانا چاہیے، یہ پیسہ براہِ راست غریبوں کو ملنا چاہیے۔ یہ سب کچھ ڈاکٹر ثانیہ نشتر سے کہا جا رہا تھا جو اس وقت بے نظیر انکم پروگرام کی چیئر پرسن ہیں اور اسی پروگرام کو احساس کے نام سے چلا رہی ہیں۔وہاں موجود کھانا کھانے والے افراد کی یہ رائے بھی تھی کہ ایسا کچھ بندوبست کیا جائے کہ وہ یہ کھانا اپنے گھر والوں کے لیے لے کر جا سکیں۔

مزید : قومی