ملتان: ٹوکن ٹیکس ادائیگیوں میں گھپلے‘ 380 گاڑیوں کی رجسٹریشن معطل 

  ملتان: ٹوکن ٹیکس ادائیگیوں میں گھپلے‘ 380 گاڑیوں کی رجسٹریشن معطل 

  

ملتان (نیوز رپورٹر) محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن ملتان نے ڈاکخانوں کے ذریعے گاڑیوں کے ٹوکن ٹیکس کی ادائیگیوں میں 2 ارب روپے سے زائد کے گھپلے کا انکشاف  ہونے پر 380 مختلف نوعیت کی گاڑیوں کی رجسٹریشن معطل کردی ہے ذرائع کے مطابق ملتان شہر(بقیہ نمبر24صفحہ 6پر)

 کے پانچ ڈاکخانوں میں گاڑیوں کے میئنول جمع کروائے گئے ٹوکن بوگس ثابت ہوئے ہیں ڈاکخانوں کے مخصوص عملہ نے ٹوکن ٹیکس کی مد میں بھاری رقوم وصول کیں لیکن حکومتی فیسیں سرکاری خزانے میں جمع نہیں کروائیں ایکسائز ذرائع نے بتایا کہ معطل ہونے والی گاڑیوں میں نیب کے ایک اعلی عہدیدار سمیت سرکاری افسران، بزنس کمیونٹی اور شہر کی معروف شخصیات کی گاڑیاں شامل ہیں ان گاڑیوں کے بوگس ٹوکن شہر کے پانچ ڈاکخانوں میں میئنول طریقہ کار سے 2016، 2017ء  اور 2018ء  میں وصول کیئے گئے ہیں تاہم سائلین نے ایکسائز حکام کی ہدایت پر ای پیمنٹ سے ٹوکن کی ادائیگی کرنا چاہی تو انہیں علم ہوا کہ پچھلے تین سال سے نادہندگان میں شامل ہیں یہ بھی اطلاعات ہیں کہ محکمہ ایکسائز ملتان کے ٹوکن ٹیکس پر مامور بعض اہلکار، ٹاوٹ مافیا اور ڈاکخانوں کے مخصوص ملازمین کی باہم ملی بھگت سے اتنی بڑی کرپشن کی گئی ہے جس میں ایکسائز ملازمین سمیت ٹرائیکا کی چاندی ہوگئی ہے۔

معطل

مزید :

ملتان صفحہ آخر -