بوریوالہ:5سالہ بچے سے بد اخلاقی کا ملزم 4روز بعد بھی گرفتار نہ ہوسکا

بوریوالہ:5سالہ بچے سے بد اخلاقی کا ملزم 4روز بعد بھی گرفتار نہ ہوسکا

  

بورے والا(نمائندہ خصوصی)جنسی درندگی کا ایک اور واقعہ،دوکاندار نے دودھ لینے آئے 5 سالہ معصوم کو مبینہ طور پر اپنی ہوس کا نشانہ بنا ڈالا،ملزم موقع سے فرار،چار روز گزرنے کے باوجود پولیس ملزم کو گرفتار نہ کرسکی،غریب محنت کش تھانے کے چکر لگا کر شٹل کاک بن گیا،بااثر ملزم کی طرف سے صلح کیلئے دباؤ،تفصیلات کے مطابق نواحی گاؤں 509 (ای بی) کے رہائشی غریب محنت کش محمد شفیق کا 5 سالہ معصوم بیٹا حسیب گذشتہ دنوں گاؤں میں عبد الرزاق چوہان نامی شخص کی دوکان پر دودھ لینے گیا دوکان پر موجود اسکے بیٹے ابوبکر چوہان نے اسے دوکان کے اندر لیجا کر مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا اسی اثناء میں متاثرہ بچے کو تلاش کرتے اسکے گھر والے دوکان پر پہنچے تو ملزم انہیں دیکھتے ہی بچے کو چھوڑ کر فرار ہو گیا واقعہ کی اطلاع تھانہ صدر پولیس اور چوکی ڈلن بنگلہ پر دی گئی پولیس نے بچے کا میڈیکل کروانے کے بعد ملزم کے خلاف مقدمہ تو درج کر لیا لیکن تاحال ملزم کو گرفتار نہیں کر سکی۔

 اس دوران بچے کا باپ غریب محنت کش اپنی محنت مزدوری چھوڑ کر انصاف کے حصول کیلئے تھانے کے چکر لگا لگا کر شٹل کاک بن چکا ہے جبکہ بااثر ملزم کی جانب سے متاثرہ خاندان پر صلح کیلئے دباؤ ڈالا جا رہا ہے محنت کش محمد شفیق نے وزیر اعلیٰ پنجاب،ایڈیشنل آئی جی ساؤتھ پنجاب اور ڈی پی او وہاڑی سے ملزم کی فوری گرفتاری اور میرٹ پر انصاف کی فراہمی کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

علاقائی -