ہتک عزت دعویٰ کی سماعت فوری طورپر روکنے کی میشاء شفیع کی استدعامسترد

 ہتک عزت دعویٰ کی سماعت فوری طورپر روکنے کی میشاء شفیع کی استدعامسترد

  

لاہور(نامہ نگار)سیشن عدالت نے ہتک عزت کے دعویٰ کی سماعت فوری طورپر روکنے کی میشاء شفیع کی استدعامسترد کر دی،عدالت نے میشاء شفیع کی متفرق درخواست پر گلوکارعلی ظفر کے وکلاء کو نوٹس جاری کر کے 13 اکتوبر کو جواب طلب کر لیا ہے،ایڈیشنل سیشن جج یاسر حیات نے علی ظفر کے ہتک عزت دعویٰ پر سماعت کی،دوران سماعت فاضل جج ہدایت کی کہ گلوکارہ میشا شفیع کے جن گواہوں کو مقدمہ میں نامزد نہیں کیا گیا انہیں کو شہادت قلمبند کروانے کے لئے آئندہ تاریا سماعت پر پیش کیاجائے، درخواست گزار کے وکیل کا موقف ہے کہ میشاء شفیع اور دیگر گواہوں کے خلاف کیخلاف ایف آئی اے سائبر کرائم سرکل میں مقدمہ درج کر لیا گیا ہے، ہتک عزت دعویٰ میں گواہوں کو مقدمہ میں نامزد کیا گیا ہے، ہتک عزت کے دعویٰ میں گلوکارعلی ظفر کے خلاف گواہوں کو ہراساں کرنے کیلئے بے بنیاد مقدمہ درج کروایا گیا ہے، میشا شفیع کے خلاف ہتک عزت دعوی کی مزید کارروائی فوری طور پر روکی جائے، گلوکار علی ظفر کے وکیل نے عدالت سے کہا کہ متفرق درخواست کی کاپی فراہم کی جائے، جواب داخل کریں گے، جس پر فاضل جج نے مذکورہ بالا حکم کے ساتھ کیس کی مزید سماعت 13 اکتوبر تک ملتوی کر دی،گلوکارعلی ظفر نے جنسی ہراساں کرنے کے الزامات پرمیشاء شفیع کے خلاف ہتک عزت دعویٰ دائر کر رکھا ہے۔

مزید :

علاقائی -