ووٹ کو عزت دو میں سے بیانیہ  نکلا میں بیمار ہوں،شہباز گل

  ووٹ کو عزت دو میں سے بیانیہ  نکلا میں بیمار ہوں،شہباز گل

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) معاون خصوصی شہباز گل نے کہا ہے کہ ن لیگ بدلتے بیانیوں سے عوام کو بے وقوف بنانے کی کوشش کر رہی ہے، بیانیے کی مخالفت پر جلیل شرقپوری سے ناروا سلوک قابل افسوس ہے، یہ لوگ ووٹ نہیں نوازشریف کو عزت دوچاہتے ہیں۔ شہباز گل نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا عدالت سے سزا پر (ن) لیگ نے بیانیہ شروع کیا کہ مجھے کیوں نکالا، مجھے کیوں نکالا کے بعد بیانیہ آیا ووٹ کوعزت دو، ووٹ کو عزت دو میں سے بیانیہ نکلا میں بیمار ہوں، ن لیگ ایک طرف ووٹ کو عزت دو کی بات کرتی ہے، دوسری جانب منتخب نمائندوں کی تذلیل کرتی ہے، ن لیگ والوں نے جلیل شرقپوری کیساتھ غیر مناسب سلوک کیا، جلیل شرقپوری نے نواز شریف کے بیانیے سے اختلاف کیا تھا۔ شہبازگل کا کہنا تھا ن لیگ ماضی کی طرح عوام کو دھوکا دینے کی کوشش کر رہی ہے، اب (ن) لیگ خود کو انقلاب لانے والی پارٹی کہہ رہی ہے، ہم ووٹ کو عزت دینے والے تھے، کیا جلیل شرقپوری ووٹ لے کر نہیں آئے؟ کیا کیپٹن (ر) صفدر یوسف رضا گیلانی سے نہیں ملتے رہے؟ کیاعزت صرف شریف خاندان کی ہے، کسی اور کی نہیں؟ ووٹ کوعزت دو کے دعویداروں نے محمد خان جونیجو کا ساتھ کیوں نہیں دیا؟ نواز شریف نے نگراں وزیراعلیٰ ہوتے ہوئے انتخابی مہم چلائی۔

شہباز گل

مزید :

صفحہ اول -