غیر قانونی پلاٹس الاٹمنٹ ریفرنس، نوا ز شریف کو اشتہاری قرار دینے کا نوٹس عدالت اور رہائشگاہ پر آویزاں 

غیر قانونی پلاٹس الاٹمنٹ ریفرنس، نوا ز شریف کو اشتہاری قرار دینے کا نوٹس ...

  

لاہور، اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں) غیر قانونی پلاٹس الاٹ کرنے کے معاملے میں احتساب عدالت نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کو اشتہاری قرار دینے کا نوٹس آویزاں کر دیا،جبکہ عدالت نے نواز شریف کو 30 دن میں عدالت پیش ہونے کی وراننگ دیدی،دوسری طرف العریزیہ ریفرنس اور ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی معاملہ پر دو اخبارات میں آئندہ ہفتے نواز شریف کی طلبی کے اشتہار جاری ہونگے۔تفصیلات کے مطابق لاہور کی احتساب عدالت کے جج اسد علی خان نے اشتہاری قرار د ینے کا عدالتی نوٹس جاری کیا، تفتیشی افسر نے نواز شریف کو اشتہاری کا نوٹس عدالت کے باہر اور انکی رہائش گاہ پر آویزاں کیا۔ تفتیشی افسر وزرات خارجہ کے ذریعے لندن اشتہاری قرار دینے کا نوٹس ارسال کریگا۔ نیب کی جانب سے حارث شفیق قریشی ایڈووکیٹ پیش ہوئے۔ اشتہاری نوٹس میں کہا گیا کہ نواز شریف 30 دن میں عدالت میں پیش ہوں ورنہ انکو عدالتی اشتہاری قرار دیا جائیگا اور قانون کے مطابق کاروائی کی جائیگی۔ عدالت نے نواز شریف کے خلاف سی آر پی سی کی دفعہ 87 کے تحت نوٹس جاری کیا۔ادھرالعریزیہ ریفرنس اور ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی معاملہ پر دو اخبارات میں آئندہ ہفتے نواز شریف کی طلبی کے اشتہار جاری ہونگے۔ اسلام آبادہائی کورٹ نے نوازشریف بذریعہ اشتہار 24 نومبر کو عدالت میں طلب کر رکھا ہے،اشتہار کے متن کے مطابق آپ کیخلا ف عدالتی کارروائی جاری ہے، چوبیس نومبر تک عدالت کے سامنے سرنڈر کریں، بصورت دیگر عدالت ضابطہ فوجداری کی دفعہ 87 کے تحت اشتہاری قرار دیگی۔یاد رہے نواز شریف کیخلاف غیر قانونی پلاٹس الاٹ کرنے کا ریفرنس نیب نے عدالت میں دائر کر رکھا ہے جس میں نواز شریف سمیت چار ملزمان کو نامزد کیا گیا ہے۔

نواز نوٹس آویزاں 

مزید :

صفحہ اول -