میاں میر قبرستان ، تجاوزات کیخلاف 13ستمبر سے آپریشن کا حکم

میاں میر قبرستان ، تجاوزات کیخلاف 13ستمبر سے آپریشن کا حکم

لاہور (نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ میں میاں میر قبرستان پر قبضہ کے خلاف کیس کی سماعت کے دوران جسٹس علی اکبر قریشی نے ریمارکس دیئے کہ تجاوزات کے زمرہ میں آنے والا ایک احاطہ بھی نہیں بچے گا۔عدالت نے میاں میر قبرستان میں تجاوزات کے خاتمہ کے لئے 13ستمبر سے آپریشن شروع کرنے کا حکم دے دیا ہے جبکہ فاضل جج نے ڈی سی لاہور کو 15روز کے اندر شہر بھر کے دیگرقبرستانوں کی اراضی پر قبضہ واگزار کرانے کا حکم بھی جاری کیا ہے۔ عدالت کو بتایا گیا کہ قبرستان کی اراضی پر قبضہ کرکے گھر تعمیر کئے گئے اور 53احاطے بنائے گئے اظہر صدیق ایڈووکیٹ نے درخواست گزار کی طرف سے عدالت کو بتایاکہ میر قبرستان کی اراضی پر بڑے پیمانے پر قبضہ کرکے احاطے تعمیر کیے گئے ،اسسٹنٹ کمشنر کینٹ نے بتایا کہ قبرستان میں 53احاظے بنائے گئے جبکہ قبرستان کی اراضی پر گھر بھی تعمیر کئے گئے ،فاضل جج نے استفسار کیا کہ کس قانون کے تحت قبرستان کی اراضی پر گھر اور احاطے تعمیر ہوئے ،جس پر محکمہ اوقاف اور ضلعی حکومت کے وکلا ء ایک دوسرے پر ملبہ ڈالتے رہے ،فاضل جج نے کہاکہ سب سن لیں ،ایک احاطہ بھی نہیں بچے گا ،ذمہ دار محکمہ اوقاف ہے یا ضلعی حکومت تمام احاطے مسمار ہوں گے۔عدالت نے 12ستمبر تک محکمہ اوقاف کو تفصیلی رپورٹ جمع کروانے کا حکم دیتے ہوئے کہاکہ 13ستمبر سے میاں میرقبرستان کے احاطے مسمار کرنے کا کام شروع کیاجائے۔فاضل جج نے لاہورشہر کے قبرستانوں کی اراضی پر قبضہ کے خلاف کیس کی سماعت کرتے ہوئے ڈی سی لاہور کو 15روز میں تمام قبرستانوں کی اراضی پر قبضہ واہ گزار کروانے کا حکم دے دیا ۔عدالت کودرخواست گزرا عبداللہ ملک کی طرف نے بتایاگیاکہ لاہور کے 620قبرستانوں کی اراضی پر بااثر افراد نے قبضے کررکھے ہیں ،اس میں سرکاری محکمے بھی شامل ہیں۔اسسٹنٹ کمشنر ز کی رپورٹ آنے کے بعد فاضل جج نے ہنجروال میں محکمہ واسا سے قبرستان کی اراضی واپس لینے اور محکمہ ایجوکیشن سے قبرستان کی 3کنال اراضی واپس لینے کا حکم دے دیا، عدالت نے رائے ونڈ میں بااثر افراد سے قبرستانوں کی اراضی پر قبضہ ختم کروانے کے احکامات جاری کئے ،جسٹس علی اکبرقریشی نے کہاکہ یہاں تو محکموں نے ہی قبرستانوں کی اراضی پر لوٹ مچارکھی ہے ،قبرستانوں کی ایک انچ بھی اراضی قبضہ گروپوں کے پاس نہیں رہنی چاہیے ،عدالت نے تمام اسسٹنٹ کمشنرز اور ڈی سی لاہور سے 15روز مین عمل درآمد کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے کارروائی ملتوی کردی۔

میاں میر قبرستان، تجاوزات

مزید : علاقائی