پاکستان کیلئے گیم چینجر ’’سی پیک‘‘ کو منجمد کرنا قوم کیساتھ نا انصافی ہوگی ، مسلم لیگ (ن)

پاکستان کیلئے گیم چینجر ’’سی پیک‘‘ کو منجمد کرنا قوم کیساتھ نا انصافی ہوگی ...

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر ، مانیٹرنگ ڈیسک ،آئی این پی) مسلم لیگ (ن) کے صدر اور قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف نے کہا ہے کہ سی پیک کو منجمد کرنا 22کروڑ عوام کے ساتھ زیادتی ہو گی کیونکہ سی پیک گیم چینجر ہے اور اس سے پاکستان کو بے پناہ فائدہ ہو گا۔میڈیا سے گزشتہ روز گفتگو کرتے ہوئے میاں شہباز شریف نے کہا کہ گیس بجلی کی قیمتوں میں اضافے کا باقاعدہ میڈیا پر اعلان ہوا، اب ای سی سی میں گیس کی قیمتوں میں اضافہ موخر کرنے کی خبر آئی، آپ فیصلہ کرکے پیچھے ہٹنے سے کیا تاثر دے رہے ہیں۔ دریں اثنا پاکستان مسلم لیگ (ن) نے وفاقی وزیر برائے صنعت و تجارت عبدالرزاق داؤد کی جانب سے چین پاکستان اقتصادی راہداری(سی پیک)منصوبوں کو ایک سال کیلئے روک دینے کے بیان کے خلاف سینیٹ میں تحریک التواء جمع کروادی۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینیٹر مشاہد حسین سید، سینیٹر پرویز رشید اور سینیٹر جاوید عباسی کی جانب سے سینیٹ میں جمع کروائی جانے والی تحریک التواء میں کہا گیا ہے کہ سی پیک قومی نوعیت کا ایک منصوبہ ہے،حکومت کی جانب سے اس عزم کا اظہار کیا گیا تھا کہ سی پیک منصوبوں کی تعمیر و ترقی کے حوالے سے ترجیحات ہمارے فرائض میں شامل ہیں، تاہم وفاقی وزیر کی جانب سے سی پیک کے حوالے سے ایک انٹرویو میں انتہائی پریشان کن باتیں کی گئی ہیں، جس میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ سی پیک منصوبوں کو ایک سال کیلئے روکنے کی تجویز زیر غور ہے، حکومت کی جانب سے ملکی مفاد کے خلاف یہ سب سے بڑا یوٹرن لیا گیا ہے،ایوان میں اس اہم معاملہ کو زیر بحث لایا جائے اور حکومت اس حوالے سے وضاحت پیش کرے۔

مسلم لیگ(ن)/تحریک التواء

لاہور (نامہ نگارخصوصی)سابق وزیر داخلہ احسن اقبال نے کہا ہے کہ لگتا ہے اس حکومت کو صرف چندہ مانگنا ہی آتا ہے ،ڈیم کے معاملے کو سنجیدہ لیا جائے ،لگتا ہے موجودہ حکومت سی پیک روکنے کے لئے آئی ہے،لاہور ہائی کورٹ میں پیشی کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے احسن اقبال نے کہا کہ ہم دھرنے اور لاک ڈاؤن نہیں کریں گے بلکہ پارلیمنٹ کے اندر حکومت کی اصلاح کے لئے اپوزیشن کریں گے ۔انہوں نے مزید کہا کہ وہ عدلیہ کا احترام کرتے ہیں، عدلیہ اور تمام اداروں کو مل کر چلنا ہو گا،انہوں نے کہا کہ بڑے ڈیموں کی تعمیر بین الاقوامی فنانسنگ کے بغیر ممکن نہیں،ہم نے بڑے بڑے منصوبے چندے کے بغیر مکمل کئے،حکومت بیرون ملک پاکستانیوں سے چندہ ضرور مانگے، مگر بھاشاڈیم کی تعمیر کے لئے سنجیدہ اقدام کرے،ہم دھرنے کرنے پر یقین نہیں رکھتے مثبت اپوزیشن نہیں کریں گے،ہم نے کڑوا گھونٹ ملک کے لئے پیا ہے، پارلیمنٹ میں رہتے ہوئے ان کی نااہلیاں بے نقاب کریں گے،حکومت کی کارروائی پر کڑا پہرا دیں گے،انہوں نے مزید کہا کہ سی پیک بند ہونے کی باتیں تشویشناک ہیں،سی پیک گیم چینجر ہے جسے کسی صورت بندنہیں ہونے دیں گے،لگتا ہے کہ یہ لوگ حکومت میں آئے ہی سی پیک بند کرنے کے لئے ہیں۔

احسن اقبال

مزید : صفحہ اول