منصورحیات کی الیکشن مہم میں بڑھ چڑھ کرحصہ لے رہے ہیں،راجہ بلال

منصورحیات کی الیکشن مہم میں بڑھ چڑھ کرحصہ لے رہے ہیں،راجہ بلال

واہ کینٹ( نمائندہ پاکستان) پی ٹی آئی واہ کینٹ کے نائب صدر راجہ بلال آف انوار چوک نے پی ٹی آئی لیبر ونگ تحصیل ٹیکسلا کے صدر ملک اعجاز، جنرل سیکرٹری سید ہارون شاہ،اخلاق بٹ المعروف ٹائیگر ، سوشل میڈیا ایکسپرٹ ملک عاقب، محمد اعجاز خان، خبیر بھائی، سید حمزہ، عبداللہ حسان، سابق امیدوار برائے کونسلر واہ کنٹونمنٹ بورڈ لعل زادہ خان، حاجی تنویر مغل المعروف بھولا بھائی، عقیل احمد سیال، سردار نعیم،، راجہ انوار،چوہدری الفت کبیر،نصیر الدین ،اسلام، مولوی شکیل، نعمان بٹ، سعید بٹ، اور دیگر پارٹی رہنماؤں کے ہمراہ صحافیوں سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ (NA-63) میں پارٹی کے نامزد امیدوار منصور حیات خان کی الیکشن مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے رہے ہیں۔ ہم صرف ٹوکن ٹانگنے والوں میں سے نہیں ہیں۔ ہم عملی طور پر پارٹی کے لیئے کام کرنے والے لوگ ہیں اورپارٹی کے نامزد امیدوار کی کامیابی کے لیئے بے لوث اور ذاتی مفاد سے بالا تر ہو کر دن رات انتھک محنت کر رہے ہیں۔ پارٹی کارکن بھی آپس کے اختلافات بھلا کر پارٹی کی مضبوطی اور منصور حیات خان کی کامیابی کے لیئے اپنا اپنا کردار ادا کر رہے ہیں۔ سابقہ الیکشن کے رزلٹ کی طرح اس مرتبہ بھی فتح کی کامیابی کے جھنڈے گاڑیں گے بلکہ ہمارے پارٹی رہنما اور ورکرز پورے حلقہ(NA-63) میں بھرپور طریقے سے متحرک ہو چکے ہیں اور گھر گھر، محلہ محلہ، گلی گلی جار کر منصور حیات خان کی الیکشن مہم چلا رہے ہیں۔ پارٹی کارکنوں کا مورال انتہائی بلندہے اور وہ پورے جوش و جذبے کے ساتھ متحرک ہیں۔ کوئی بھی طاقت منصور حیات خان کو کامیابی سے نہیں روک سکتی ہے۔ انشاء اللہ پارٹی کی اعلیٰ قیادت کو نہ پہلے کبھی مایوس کیا ہے اور نہ ہی اس مرتبہ بھی مایوس کریں گے۔ حلقہ کی عوام با شعور ہیں وہ پارٹ ٹائم اور ذاتی مفاد کی خاطر سیاست کرنے والوں کو 14اکتوبر کے دن اپنی ووٹ کی پرچی کی طاقت سے نشان عبرت بنا دیں گے اور حلقہ میں تعمیر و ترقی کا ایک نیا دور شروع ہو گا۔ منصور خان ا س وقت حلقہ کی عوام کے فیورٹ امیدوار ہیں جو کہ اپنے بزرگوں کے نقش قدم پر چلتے ہوئے نہ صرف عوام سے براہ راست رابطے میں ہیں بلکہ وہ حلقہ کی عوام کے مسائل کے حل کے لیئے اپنی پوری توانائیاں صرف کریں گے۔حلقہ میں منصور حیات خان کی دن بدن تیزی سے بڑھتی ہوئی مقبولیت سے سیاسی مخالفین پریشان ہیں ۔ان کی ٹرین کی بوگیاں ان سے الگ ہونا شروع ہو گئی ہیں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر