جسٹس قاضی فائزاورجسٹس کے کے آغا کے ریفرنسزپرکارروائی روک دی گئی،چیف جسٹس پاکستان

جسٹس قاضی فائزاورجسٹس کے کے آغا کے ریفرنسزپرکارروائی روک دی گئی،چیف جسٹس ...
جسٹس قاضی فائزاورجسٹس کے کے آغا کے ریفرنسزپرکارروائی روک دی گئی،چیف جسٹس پاکستان

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ جوڈیشل کونسل نے جسٹس قاضی فائزاورجسٹس کے کے آغا کے ریفرنسزپرکارروائی روک دی،کارروائی سپریم کورٹ میں آئینی درخواستیں دائر ہونے کے بعد روکی گئیں ۔میڈیا رپورٹس کے مطابق چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہا ہے کہ جسٹس قاضی فائزعیسیٰ اورجسٹس کے کے آغاکےخلاف سپریم جوڈیشل کونسل نے کارروائی روک دی ہے،صدارتی ریفرنس پرکارروائی سپریم کورٹ میں زیرالتوا آئینی درخواستوں کے باعث روکی،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ ریاست کوچلانے میں سیاسی گنجائش کی کمی پربارکی تشویش کو نظرانداز نہیں کیاجاسکتا،ریاستی امورمیں سیاسی فقدان مستقبل کی آئینی جمہوریت کیلئے اچھا شگون نہیں،چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ نے کہاکہ سیاسی انجینئرنگ کیلئے احتساب کے عمل کے بارے میں یکطرفہ جھکاو¿کاتاثرتباہ کن ہے،اس تاثرکوزائل کرنے کیلئے فوری اقدامات کی ضرورت ہے تاکہ احتساب کے عمل کی ساکھ متاثرنہ ہو،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ شہریوں سے لوٹی دولت کی واپسی ایک اچھا عمل ہے،غیرجانبداری عمل کے بغیریہ اقدام معاشرے کیلئے زیادہ مہلک ہوگا،چیف جسٹس پاکستان نے کہا کہ قلیل المدتی سیاسی فائدے کے لیے آئینی حقوق پر سمجھوتا نہیں ہونا چاہیے،جمہوریت میں دور اندیشی اور برداشت لازمی ہے،اختلاف اور برداشت کے بغیر جبر کا نظام ہوتا ہے،چیف جسٹس نے کہا کہ ہم نے ماضی میں دیکھا کہ اس کے خطرناک نتائج برآمد ہوتے ہیں۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد


loading...